بپھری عوام کا نوجوان لڑکی کے ساتھ انتہائی خوفناک سلوک کیونکہ۔۔۔

بپھری عوام کا نوجوان لڑکی کے ساتھ انتہائی خوفناک سلوک کیونکہ۔۔۔
بپھری عوام کا نوجوان لڑکی کے ساتھ انتہائی خوفناک سلوک کیونکہ۔۔۔

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

گوئٹے مالا(مانیٹرنگ ڈیسک) گوئٹے مالا میں مشتعل ہجوم نے 16سالہ لڑکی کو بہیمانہ تشدد کے بعد آگ لگا کر زندہ جلا دیا۔ یہ واقعہ ریو بریوو نامی گاﺅں میں پیش آیا۔ سوشل میڈیا پر بڑی تعداد میں شیئر کی جانے والی 4منٹ 38سیکنڈ کی اس ہولناک ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ 25سے زیادہ نوجوانوں نے لڑکی پر گھونسوں اور لاتوں سے تشدد کیا اور پھر اسے آگ لگا دی۔ لڑکی پر الزام تھا کہ وہ ایک ٹیکسی ڈرائیور کو قتل کرنے والے گینگ کی رکن تھی۔

مزیدپڑھیں:یہ آدمی کس وجہ سے جیل توڑ کر بھاگ نکلا،وجہ جان کر آپ کیلئے ہنسی روکنا مشکل ہو جائے گا

بتایا جاتا ہے کہ مبینہ طور پر لڑکی اپنے دو ساتھیوں کے ہمراہ 68سالہ کارلوس نامی ڈرائیور کو دوران ڈکیتی گولی مارکر فرار ہوئی، تنگ گلیوں میں فرار ہوتے ہوئے لڑکی اپنے ساتھیوں سے بچھڑ کر اس ہجوم میں پھنس گئی، جہاں اس کو اس قدر پیٹا گیا کہ وہ لہولہان ہو گئی۔ پھر ایک شخص گیلن میں پٹرول لے کر آیا اور لڑکی پر چھڑک کر آگ لگا دی۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ پولیس نے لڑکی کو بچانے کی کوشش کی لیکن مشتعل ہجوم نے اہلکاروں کو آگے بڑھنے سے روک دیا۔ لڑکی کی شناخت نہیں ہو سکی۔ ایک نیوز ویب سائٹ کے مطابق کوئی بھی اس واقعے کی تحقیقات نہیں کر رہا، اس سے علاقے میں مزید ہنگامے برپا ہوں گے۔ یہ ویڈیو یوٹیوب پر بھی اپ لوڈ کی گئی جسے لاکھوں لوگوں نے دیکھا لیکن بعد ازاں اسے یوٹیوب سے ہٹا دیا گیا۔

مزید :

انسانی حقوق -