وہ اے ٹی ایم جس سے آپ پیسے نکالنے کی کوشش کریں تو رقم کی بجائے بجلی کا زوردار جھٹکا ملتا ہے، ایسا کیوں ہے؟ وجہ ایسی کہ جان کر آپ کا دل بھی اسے استعمال کرنے کو کرے گا

وہ اے ٹی ایم جس سے آپ پیسے نکالنے کی کوشش کریں تو رقم کی بجائے بجلی کا زوردار ...
وہ اے ٹی ایم جس سے آپ پیسے نکالنے کی کوشش کریں تو رقم کی بجائے بجلی کا زوردار جھٹکا ملتا ہے، ایسا کیوں ہے؟ وجہ ایسی کہ جان کر آپ کا دل بھی اسے استعمال کرنے کو کرے گا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) انٹیلی جنٹ انوائرنمنٹس (Intelligent Environments) نامی ایک ٹیکنالوجی فرم نے ایک ایسی ڈیوائس ایجاد کر رکھی ہے جو مختلف بری عادتیں چھڑوانے کے لیے استعمال ہوتی ہے۔کلائی پر بندھی اس ڈیوائس میں ہدایات داخل کر دی جاتی ہیں اور جب آدمی اپنی ہی مقرر کردہ حد سے آگے بڑھتا ہے یہ تو اس ڈیوائس سے اسے 255وولٹ کا ایک شدید جھٹکا لگتا ہے اور وہ اس کام سے رک جاتا ہے۔ اب فرم نے اپنی یہ ٹیکنالوجی بینکوں کوبھی فراہم کرنی شروع کر دی ہے۔ اس کے ابتدائی گاہکوں میں بینک آف آئرلینڈ، سینزبریز بینک(Sainsbury's Bank)لوئیڈز بینک اور ٹویوٹا کی مالیاتی سروسز شامل ہیں۔ برطانیہ کے کئی بینک بھی فرم کی خدمات حاصل کرنے کے لیے پر تول رہے ہیں۔ یہ ٹیکنالوجی حاصل کرکے ان بینکوں نے اپنی اے ٹی ایمزکے ساتھ منسلک کر رکھی ہے۔ ان بینکوں کے صارفین اب اپنے اخراجات کی ایک حد مقرر کر سکتے ہیں۔ جب وہ اس مقررہ حد سے زیادہ رقم اے ٹی ایم سے نکلوائیں گے تو مشین سے انہیں رقم کی بجائے بجلی کا زوردار جھٹکا لگے گا۔ اس طرح وہ اپنے اخراجات کو مقررہ حد تک محدود رکھنے میں کامیاب رہیں گے۔ فرم کے عہدیدار ویبر(Webber) کا کہنا ہے کہ ”اگر آپ میں قوت ارادی ہے تو یقینا یہ بہت عمدہ بات ہے مگر بہت سے لوگوں میں یہ نہیں ہوتی۔ یہی وجہ ہے کہ وہ اپنے اخراجات کم کرنے میں ناکام رہتے ہیں۔ اس ٹیکنالوجی کے ذریعے قوت ارادی سے محروم افراد کو مالی بحران کا شکار ہونے سے بچانا ممکن ہو سکے گا۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -