سیاسی پارٹیوں کی لڑائی کی وجہ سے پاکستان کی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ گئی: عثمان ذوالفقار

سیاسی پارٹیوں کی لڑائی کی وجہ سے پاکستان کی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ گئی: ...

  

لاہور(کامرس رپورٹر)فیڈریشن آف پاکستان چیمبر زآف کامرس اینڈ انڈسٹری(ایف پی سی سی آئی) کی قائمہ کمیٹی برائے ٹیکسٹائل اینڈ الائیڈ پروڈکٹ کے چےئرمین میاں عثمان ذوالفقار نے کہا ہے کہ سیاسی پارٹیوں کی لڑائی کی وجہ سے پاکستان کی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ گی ہے۔ٹیکسٹائل سیکٹر جو ملک کو زیرمبادلہ کما کر دیتا ہے،اس سیکٹر کے ساتھ سوتیلی اولاد جیسا سلوک کیا جارہا ہے۔ٹیکسٹائل انڈسٹری میں 10ملین لوگ روزگار کماتے ہیں اور اس سیکٹر کا پاکستان کی کل ایکسپورٹ میں 53%حصہ ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت اور اپوزیشن کے ایک میز پر آنے کی خبر عوام اور کاروباری برادری دونوں کیلئے خوش آئندہے،معاملات کا حل ٹیبل پر بیٹھ کر ہی نکلتا ہے اگر اس بات کی سمجھ کچھ سیاسی پارٹیوں کے رہنماؤں کو آ جائے تو ملک میں کافی حد تک امن کی فضاء قائم ہو گی اور بیرونی سرمایہ کاروں کا بھی پاکستان کی طرف سے رجحان بڑئے گا۔

انہوں نے مزید کہاکہ ملکی معاشی صورتحال انتہائی تشویشناک ہو چکی ہے ،بجلی و گیس کی قلت نے صنعتی اور تجارتی سرگرمیوں کو مفلوج کر دیا ہے ، انہوں نے کہا کہ سابقہ اور موجودہ حکومتوں کی پالیسیوں کی وجہ سے ملک میں معاشی مارشل لاء لگا ہواہے جس کی وجہ سے توانائی کا بحران ، کاروبار کی بندش ، بیرونی طویل المدتی سرمایہ کاری میں کمی ، بیرونی ممالک میں پاکستان کا خراب تصور ، بنیادی سہولیات کا فقدان، لاء اینڈ آرڈر کی خراب صورتحال ، جدید ٹیکنالوجی میں سست روی، برآمدات میں کمی اور جنریٹرز وغیرہ کی مد میں زرمبادلہ کا حد سے زیادہ باہر جانا ، بے جا ان ڈائریکٹ ٹیکسزکی بھر مار اور وزارت خزانہ کا زمینی حقائق دیکھے بغیر IMF کی ڈکٹیشن پر عمل کیا جا تا ہے ، انہوں نے کہا کہ حکومت کو آنے والے بجٹ میں بہت سی اصلاحات کرنا ہونگی ، تاکہ ملکی مسائل میں کمی لائی جا سکے ۔

مزید :

کامرس -