نئے ٹیکس لگانے سے کاروبار ٹھپ ہو کر رہ جائیں گے،راؤ خورشید علی

نئے ٹیکس لگانے سے کاروبار ٹھپ ہو کر رہ جائیں گے،راؤ خورشید علی

  

لاہور(کامرس رپورٹر)لاہور ٹریڈرز رائٹس فورم کے وائس چےئرمین راؤ خورشید علی نے کہا ہے کہ معاشی بدحالی کی وجہ سے کاروبارمندے کا شکار ہیں ان حالات میں نئے ٹیکس لگانے سے کاروبار ٹھپ ہو کر رہ جائیں گے ،اور خود حکومت کے لئے کئی طرح کی مشکلات پیدا ہو نے کا خدشہ ہے یہ بات انہو ں نے گزشتہ روز اپنے ایک بیان میں کہی۔ راؤ خورشید علی نے کہاکہ ملکی معیشت میں تاجر برادری ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے تاہم اس وقت ملک میں سیاسی و معاشی عدم استحکام کی وجہ سے کاروباری برادری شدید پریشانی سے دوچار ہے ان حالات میں آنے والے بجٹ 2016-17 میں نئے ٹیکس لگانے کی حکمت عملی سے کچھ خاص استفادہ حاصل نہ ہوگا بلکہ خود حکومت کے لئے کئی طرح کی پریشانیاں پیدا ہو سکتی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ حکومت کو چاہیے کہ اپنے پیداواری یونٹ توجہ دے اور انکی کارکردگی بڑھانے کے ساتھ ساتھ ایف بی آر کے محکمے کی کارکردگی کو بہتر بنائے ،انہوں نے کہا کہ حکومت ٹیکسوں کی تعداد میں اضافہ کر کے کسی صورت اپنے مقاصد حاصل نہ کر پائے گی بلکہ حکومت کو چاہیے کہ وہ اپنے ٹیکس نیٹ کو بڑھائے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -