فلم مالک کی نمائش پر پابندی کیخلاف درخواستوں میں پنجاب حکومت سے وضاحت طلب

فلم مالک کی نمائش پر پابندی کیخلاف درخواستوں میں پنجاب حکومت سے وضاحت طلب

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے فلم مالک کی نمائش پر پابندی کے خلاف درخواستوں میں پنجاب حکومت سے وضاحت طلب کی ہے کہ فلم کی نمائش سے قبل پروڈیوسر نے صوبائی حکومت سے اجازت نامہ لیا تھا یا نہیں؟جسٹس شمس محمود مرزا نے اظہر صدیق ایڈووکیٹس اور شیراز ذکاء سمیت دیگر کی طرف سے دائر درخواستوں پر سماعت شروع کی تو وزارت اطلاعات و نشریات کی طرف سے جواب داخل کراتے ہوئے سرکاری وکیل نے موقف اختیار کیا کہ حکومت کو فلم کی نمائش پر پابندی کا اختیار حاصل ہے، وزارت اطلاعات و نشریات نے فلم مالک کی نمائش کے لئے جاری سرٹیفکیٹ منسوخ کیا ہے، پنجاب حکومت کی طرف سے اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل سمعیہ خالد نے کہا کہ صوبائی حکومت کا اس کیس سے کوئی تعلق نہیں بنتا تاہم عدالت نے کہ 18ویں ترمیم کے بعد فلم سنسر بورڈ صوبائی حکومتوں کے انتظام میں ہیں ، اس لئے پنجاب حکومت بتائے کہ کیا فلم مالک کے پروڈیوسر نے نمائش سے قبل حکومت سے کوئی اجازت نامہ لیا یا نہیں، درخواست گزاروں کی طرف سے موقف اختیار کیا گیا کہ فلم مالک میں پاکستان میں ہونے والی کرپشن کے خلاف بات کی گئی ہے ، حکومت نے خوفزدہ ہو کر اس فلم پر پابندی عائد کی ہے ، وفاقی حکومت کو فلم مالک کی نمائش پر پابندی کا اختیار نہیں ہے ،حکومتی پابندی کالعدم کر کے فلم کی ملک بھر میں نمائش کی اجازت د ی جائے، عدالت آج 24مئی سے روازنہ کی بنیاد پر اس کیس کی سماعت کرے گی ۔

مزید :

صفحہ آخر -