قائد اعظم لائبریری کے بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کے قانون کا نوٹیفکیشن داخل کرانے کیلئے چیف لائبریرین کو 15جون تک کی مہلت

قائد اعظم لائبریری کے بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کے قانون کا نوٹیفکیشن داخل ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے قائد اعظم لائبریری کے بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کے قانون کا نوٹیفکیشن داخل کرانے کے لئے چیف لائبریرین کو 15جون تک مہلت دے دی ۔جسٹس شاہد وحید نے اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی،د رخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ قائد اعظم لائبریری میں وکیشنل اینڈ ٹریننگ آرڈیننس کے تحت بورڈ آف گورنرز کی تعیناتیاں کی گئی ہیں، بورڈ آف گورنرز میں عطاء الحق قاسمی، جسٹس ریٹائرڈ عامر رضا خان، مہر جیون خان، سائرہ افضل تارڑ، اختر سید ، عارفہ سیدہ زہرہ، عرفانہ قاسم اور عارفہ سبوحی کو سیاسی بنیادوں پر تعینات کیا گیا ہے، ان افراد کا لائبریری کے انتظامات یا دیگر امور کے حوالے سے کوئی تجربہ نہیں ہے جبکہ جس کی آرڈیننس کے تحت بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کی گئی ہے وہ غیرمتعلقہ ہے، انہوں نے استدعا کہ لائبریری کے بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کالعدم کی جائے اور موثر بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کے لئے حکومت کو قانون بنانے کا حکم دیا جائے ، ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل عارف راجہ نے عدالت کو بتایا کہ چیف لائبریرین نے اس درخواست میں جواب داخل کرا دیا ہے تاہم بورڈ آف گورنرز کی تعیناتی کے قانون کا نوٹیفکیشن داخل کرانا باقی ہے لہذامزید مہلت دی جائے، عدالت نے استدعا منظور کرتے ہوئے مزید سماعت 15جون تک ملتوی کر دی۔

مزید :

صفحہ آخر -