گورنر سندھ کی زیر صدارت اجلاس، ترقیاتی منصوبوں کا جائزہ

گورنر سندھ کی زیر صدارت اجلاس، ترقیاتی منصوبوں کا جائزہ

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)کراچی حیدرآباد موٹر وے ایم نائن ، لیاری ایکسپریس وے کے تعمیراتی کام اور دیگر ترقیاتی منصبوں کا جائزہ اجلاس گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد خان کی زیرِ صدارت پیر کو گورنر ہاؤس میں منعقد ہوا۔ گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العبادخان نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ لیاری ایکسپریس وے پر کام کی رفتار کو بڑھا کر اسے اس سال دسمبر تک ہر صورت میں مکمل کرلیا جائے تاکہ عوام اسے استعمال کرسکیں۔اجلاس میں صوبائی وزیر بلدیات جام خان شورو، چیئرمین نیشنل ہائی وے اتھارٹی شاھد اشرف تارڑ ، پرنسپل سیکریٹری گورنر محمد حسین سید ، ڈائریکٹر جنرل فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن میجر جنرل محمد افضل، سیکریٹری بلدیات نور محمد لغاری، کمشنر کراچی سید آصف حیدرشاہ، میونسپل کمشنر بلدیہ عظمیٰ کراچی سمیع الدین صدیقی، ضلع وسطی وغربی کے ڈپٹی کمشنرز اور دیگر متعلقہ حکم نے شرکت کی ۔ گورنر سندھ نے کہا کہ ترقیاتی منصوبوں سے متعلق تمام اسٹیک ہولڈرز کے متواتر و مسلسل اجلاس منعقد کرنے کا مقصد ان منصوبوں کی راہ میں حائل رکاوٹوں کو فوری طور پر دور کرنا ہے تاکہ عوام کو ان کے فوائد جلد از جلد منتقل کئے جاسکیں۔ انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے کراچی کے شہریوں کے لئے انتہائی اہم منصوبہ لیاری ایکسپریس وے مختلف وجوہات کے باعث 8 سال کے طویل عرصہ تک معطل رہا لیکن اب جبکہ کام بھرپور طریقہ سے شروع کیا جاچکا ہے اس کی جلد از جلد تکمیل ضروری ہے انہوں نے کہا کہ اب صرف1.1 کلومیٹر رائٹ آف وے کا معاملہ تصفیہ طلب ہے جو کہ عدالت کے ذریعہ جلد حل ہوجائے گا۔ انہوں نے منصوبے کیلئے این ایچ اے کی جانب سے فنڈز کی بروقت ریلیز کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس سے یہ منصوبہ اپنے شیڈول کے مطابق مکمل ہوجائے گا۔ انہوں نے ضلع وسطی اور غربی کے ڈپٹی کمشنروں کو ہدایت کی کہ وہ ایف ڈبلیو او اور این ایچ اے کے حکام کے ساتھ قریبی رابطہ رکھیں اور انہیں رائٹ آف وے کے حصول کے ضمن میں ہونے والے پیش رفت سے آگاہ کرتے رہیں۔ انہوں نے کہا کہ کراچی حیدرآباد موٹر وے ایم نائن کے 136 کلومیٹر پر کام کا آغاز خوش آئند ہے اور اس کی جلد از جلد تکمیل سے شہریوں کو جدید ترین سفری سہولیات فراہم ہوں گی۔ گورنر سندھ نے اجلاس کے دوران فراہمی آب کے منصوبوں K-IV کے ڈیزائن کے حوالے سے معاملات جلد حل کرنے کی ہدایت کی ۔ انہوں نے ایم ڈی ادارہ فراہمی و نکاسی آب مصباح الدین فرید کو احکامات دئے کہ وہ ایف ڈبلیو کے حکام سے قریبی رابطہ رکھیں تاکہ اس اہم منصوبے پر کام کا جلد از جلد آغاز کیا جاسکے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ سکھر ملتان موٹر وے پر کام کا آغازخوش آئند ہے ، انہو ں نے ملیر ایکسپریس وے کی نظر ثانی شدہ فزیبلیٹی جلد از جلد تیار کرنے کی ہدایت کی تاکہ اس پر بھی کام کا آغاز کیا جاسکے ۔ انہوں نے کہا کہ عوامی فلاح و بہبود کے منصوبے تیز رفتار ترقی کیلئے ضروری ہیں اور اب جبکہ صوبہ بھر میں امن وامان کی صورتحال بہت بہتر ہے صوبہ کے ترقیاتی منصوبوں کو جلد از جلد مکمل کرنے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ چیئرمین نیشنل ہائی وے اتھارٹی شاھد اشرف تارڑ نے گورنر سندھ کو یقین دہانی کرائی کہ این یچ اے اس منصوبے کو اس سال 25 دسمبر تک مکمل کرلے گی اور اس بات کو یقینی بنانے کے لئے ہر ممکن اقدامات کئے جارہے ہیں۔ ڈائریکٹر جنرل ایف ڈبلیو او میجر جنرل محمد افضل نے گورنر سندھ کو بتایا کہ منصوبے کے تعمیراتی مقام پر جدید ترین مشینوں پہنچا دی گئی ہے اور اسے بھرپور طریقہ سے استعمال کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ منصوبے کی راہ میں مختلف مقامات پر چھوٹے چھوٹے حصوں کے رائٹ آف وے کے باعث مشکلات پیش آرہی ہیں جنہیں جلد حل کرلیا جائے گا۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -