بچے سے استاد کی مبینہ بد سلوکی کے خلاف اہل علاقہ مشتعل، سکول پر حملہ کردیا

بچے سے استاد کی مبینہ بد سلوکی کے خلاف اہل علاقہ مشتعل، سکول پر حملہ کردیا
بچے سے استاد کی مبینہ بد سلوکی کے خلاف اہل علاقہ مشتعل، سکول پر حملہ کردیا

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) نجی سکول میں بچے سے استاد کی مبینہ بد سلوکی کے خلاف اہل علاقہ مشتعل ہوگئے اور سکول پر حملہ کردیا جبکہ پولیس مظاہرین کو روکنے میں مکمل طور پر بے بس ہوچکی ہے۔

نجی ٹی وی اے آروائی نیوز کے مطابق لاہور کے علاقے باگڑیاں میں ایک نجی سکول کے استاد کی طرف سے کمسن بچے کے ساتھ بد سلوکی کا واقعہ پیش آیا جس پر اہل علاقہ مشتعل ہوگئے اور سکول پر حملہ کردیا۔ مشتعل اہل علاقہ نے سکول پر شدید پتھراو¿ کیا جبکہ سکول کی بلڈنگ کے شیشے توڑ دیے۔ سکول پر حملے کی خبر سن کر پولیس بھی موقع پر پہنچ گئی اور سکول میں چھٹی کرادی جس کے بعد تمام بچے اپنے گھروں کو چلے گئے تاہم سکول کا سٹاف عمارت کے اندر ہی محصورہو کر رہ گیا ۔ پولیس جب بھی سٹاف کو سکول سے نکالنے کی کوشش کرتی ہے تو مظاہرین نئے سرے سے حملہ کردیتے ہیں جس کی وجہ سے پولیس بے بس ہو کر رہ گئی ہے ۔

پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے واقعے کی تحقیقات شروع کردی ہیں ۔ دوران تحقیق ایک خاتون نے الزام لگایا کہ اس کا 8 سالہ بیٹا سکول آیا لیکن 14 روز گزرنے کے باوجود گھر نہیں پہنچا۔ علاوہ ازیں مظاہرین کا کہنا تھا کہ اس سکول میں بچوں پر ظلم کیا جارہا ہے اور بچے کے ساتھ بدسلوکی کرنے والے ٹیچر کو ہمارے حوالے کیا جائے۔

مزید :

لاہور -