یوکرین میں فٹبال میچ فکسنگ ، 35کلبز ملوث نکلے

یوکرین میں فٹبال میچ فکسنگ ، 35کلبز ملوث نکلے

کیو(آئی این پی) یوکرینی پولیس نے ملک کے 35فٹبال کلبز پر میچ فکسنگ میں ملوث ہونے کے الزامات عائد کردیے جس کی وجہ سے یہ کلبز سالانہ ملین ڈالرز کمارہے تھے۔پولیس کا کہنا ہے کہ یوکرینی فٹبال ڈویژن کے دو تہائی کلبز اس سے جڑے ہوئے ہیں۔تاہم فہرست میں چیمپئن ڈائنامو کیو اور شاکتر ڈونیسٹک کے نام شامل نہیں ہیں، یوکرین کے وزیر داخلہ آرسین ایواکوف نے سوشل میڈیا پر لکھا کہ کلب کے صدور، سابق اور موجودہ پلیئرز، ریفریز، ٹرینرز اور کمرشل آرگنائزیشن اس میں ملوث ہیں، مجموعی طور پر ہمارے پاس 320 افراد کے 57 پروف کیسز میں ملوث ہونے کی دستاویزات ہیں،

ایواکوف نے مزید لکھا کہ اس سے مذکورہ کلب 4.2 ملین یوروز سالانہ جمع کیے جاتے ہیں، یہ رقم یوکرینی میچز پر ایشیا میں لگائی جانے والی شرطوں سے حاصل کی جاتی ہے۔دوسری جانب یوکرین کے ڈپٹی پولیس چیف ایگور کوپیرینٹس نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ اس حوالے سے ابھی کوئی گرفتاریاں عمل میں نہیں آئی ہیں، انھوں نے مزید بتایا کہ ریفریز اور پلیئرز کو 1100 سے 3700 ڈالر زکے درمیان رقم رشوت کے طور پر دی جاتی رہی ہے، ابھی یہ واضح نہیں ہے کہ آفیشلز نے اس حوالے سے ابتدائی تحقیقات کے بعد ہی باتیں عوام میں لے آئے، واضح رہے کہ یوکرین میں ہفتے کو رئیل میڈرڈ اور لیورپول کے درمیان یوئیفا چیمپئنز لیگ کا فائنل بھی شیڈول ہے۔دوسری جانب یوکرینی فٹبال فیڈریشن کے سربراہ آندرے پیولیکو نے کہا کہ یوکرینی فٹبال میں آج تاریخی دن ہے، یہ یوکرینی فٹبال کو صاف کرنے کا نقطہ آغاز ثابت ہوگا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی