پنجاب میں ڈیڑھ کروڑ مزدور بچے، بیشتر تشدد کا شکار

پنجاب میں ڈیڑھ کروڑ مزدور بچے، بیشتر تشدد کا شکار

ملتان ( اعجاز مرتضیٰ سے ) حکومتی دعو ے دھرے کے دھرے رہ گئے ۔ چائلڈ لیبر کا خاتمہ نہ ہو سکا۔ پنجاب میں مزدور بچوں کی تعداد ڈیڑھ کروڑ سے تجاوز کر گئی ‘ کتابیں اورکھلونے بھول گئے ۔کسمپرسی کی حالت میں زندگی بسر کرنے لگے ۔تفصیل کے مطابق چائلڈ لیبر کے خاتمے کے حوالے سے حکومت پنجاب کے اعلانات محض اعلانات ہی ثابت ہوئے ہیں ۔پنجاب حکومت کی جانب سے مزدور بچوں کو اینٹوں کے بھٹوں پر کام کرنے کی بجائے سکولز میں بھجوانے(بقیہ نمبر69صفحہ12پر )

کے اقدامات بے سود ثابت ہوئے ہیں ۔ اس وقت صورتحال یہ ہے کہ بھٹوں پر کام کرنے والے بچوں کو وہاں سے نکال کر سکولز میں داخل کرنے اور ان کا وظیفہ مقرر کرنے کی مہم عارضی ثابت ہوئی ۔ اب پھر بڑی تعداد میں بچے بھٹوں پر کام کرنے پر مجبور ہیں ۔اس کے علاوہ ہوٹلوں‘ کارخانوں‘ ورکشاپوں‘ دکانوں‘ فیکٹریو ں‘ سائیکل سٹینڈز‘ پٹرول پمپس‘ دفاتر ‘ گوداموں میں بھی بچے جبری مشقت کا شکار ہیں ۔ بڑی تعداد میں مزدور بچوں کو جسمانی تشدد اورزیادتی کا نشانہ بنائے جانے کی بھی شکایات سامنے آئی ہیں ۔اس حوالے سے لیبر ڈیپارٹمنٹ اور چائلڈ پروٹیکشن بیوروکا شرمناک کردار سامنے آیا ہے ۔ یہ دونوں ادارے بچوں کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام ہو چکے ہیں اور فرضی کارروائیاں کر رہے ہیں ۔ لیبر افسروں و اہلکاروں نے کارخانوں ‘ ورکشاپوں ‘دکانوں ‘ فیکٹریوں ‘ گوداموں اور پٹرول پمپس مالکان سے منتھلیاں طے کر کے مزدور بچوں کو مالکان کے رحم و کرم پر چھوڑ رکھا ہے جبکہ چائلڈ پروٹیکشن بیورو بھی ظلم کا شکار مزدور بچوں کو تحفظ دینے میں ناکام ہو چکا ہے ۔ اس سلسلے میں پنجاب حکومت نے بڑے دعوے کئے کہ چائلڈ لیبر کے مرتکب افراد کے خلاف مقدمات درج کئے جائیں گے اور مزدور بچوں کو تحفظ دیاجائے گا مگر افسوس کہ یہ صرف سیاسی اعلانات ہی ثابت ہوئے ہیں اور جگہ جگہ مزدور بچے کسمپرسی کی حالت میں ظلم کی چکی میں پس رہے ہیں ۔ سماجی حلقوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ عملی اقدامات کرکے چائلڈ لیبر کا خاتمہ کیاجائے اور چائلڈ لیبر کے مرتکب افراد کے خلاف موثر قانون سازی کرکے اس پر عملدرآمد بھی کیاجائے اوربچوں سے ا ن کے حقوق چھیننے والوں کے خلاف مقدمات درج کرکے ملزمان کو جیلوں میں ڈالا جائے اور مزدور بچوں کو بازیاب کراکر سکولوں میں داخل کرایاجائے اور تمام سہولتیں دی جائیں تاکہ وہ بھی امیروں کے بچوں کی طرح اپنے بچپن کے دور سے لطف اندوز ہو سکیں ۔

چائلڈ لیبر

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...