حیفا میں مظاہرین پر اسرائیلی تشدد کی تحقیقات کی جائیں

حیفا میں مظاہرین پر اسرائیلی تشدد کی تحقیقات کی جائیں

برسلز (صباح نیوز)یورپی یونین نے شمالی فلسطین کے شہر حیفا میں اسرائیلی پولیس کے پرامن مظاہرین پر وحشیانہ تشدد کی شدید مذمت کرتے ہوئے مظاہرین پر تشدد کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق یورپی یونین کے خارجہ امور (بقیہ نمبر48صفحہ12پر )

کے ترجمان نے برسلز میں ایک بیان میں کہا کہ حیفا شہر میں اسرائیلی پولیس نے پرامن مظاہرین پر ہولناک تشدد کیا اور انسانی حقوق کی پامالی کی گئی۔ انسانی حقوق کے دفاع کے لیے پرامن مظاہرے کرنے والوں پراسرائیلی پولیس کا تشدد خود انسانی حقوق اور عالمی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ اسرائیلی حکام نے انسانی حقوق کے مندوب عمر شاکر کا پاسپورٹ منسوخ کیا حالانکہ وہ انسانی حقوق کی تنظیم ہیومن رائٹس واچ کے فلسطین میں مندوب ہیں۔ بیان میں کہا گیا کہ یورپی یونین کو توقع ہے کہ اسرائیلی پولیس پرامن مظاہرین کے حقوق کی پامالیوں اجتناب کرے گی۔خیال رہے کہ تین روز قبل اسرائیلی پولیس نے حیفا شہر میں غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوج کے تشدد سے نہتے فلسطینیوں کے قتل عام کے خلاف ہونے ولے مظاہرے پر وحشیانہ تشدد کیا اور کئی مظاہرین کو حراست میں لے لیا تھا۔ گرفتار کیے گئے فلسطینیوں کے خلاف عدالتوں میں مقدمات چلانے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...