’اپنی اس ایک عادت کی وجہ سے میں جسم فروشی پر مجبور ہوگئی‘ جسم فروش خاتون نے یہ کام کرنے کی ایسی وجہ بتادی کہ ہر شخص توبہ پر مجبور ہوجائے

’اپنی اس ایک عادت کی وجہ سے میں جسم فروشی پر مجبور ہوگئی‘ جسم فروش خاتون نے ...
’اپنی اس ایک عادت کی وجہ سے میں جسم فروشی پر مجبور ہوگئی‘ جسم فروش خاتون نے یہ کام کرنے کی ایسی وجہ بتادی کہ ہر شخص توبہ پر مجبور ہوجائے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن(نیوز ڈیسک) برطانوی ٹی وی ’چینل 5‘پر جنسی دھندے کے پراسرار رازوں کو منظر عام پر لانے والی ڈاکومنٹری ”دی سیکس بزنس“ نے آج کل خوب تہلکہ برپا کر رکھا ہے۔ اس ڈاکومنٹری کی تازہ ترین قسط میں فیونا نامی خاتون کی کہانی پیش کی گئی ہے جو گزشتہ تین سال سے سڑکوں پر جسم فروشی کر رہی ہے۔ فیونا کی کہانی بہت ہی درد ناک ہے کیونکہ اس کا تعلق ایک بڑے اور امیر خاندان سے ہونے کے باوجود ہیروئن کی لت نے اسے اس حالت کو پہنچا دیا کہ آج وہ سڑکوں پر اپنا جسم بیچ کر نشہ خریدنے پر مجبور ہے ۔

فیونا نے اپنی زندگی کے المناک حالات کے بارے میں بتایا ”میں شادی شدہ تھی اور میرے تین بیٹے تھے۔ پھر میری زندگی میں ایک ایسا موڑ آیا کہ میں ہیروئن کے نشے پر لگ گئی ۔ یہ شیطانی نشہ ہے جس نے مجھے برباد کر دیا ہے۔ میں اس سے نفرت کرتی ہوں لیکن اسے چھوڑ نہیں سکتی ۔میری زندگی اب اس کے قابو میں ہے۔ میں نے سب کچھ گنوا دیا ہے ۔

میں نے کبھی تصور بھی نہیں کیا تھا میں اتنی گر جاﺅں کی کے اپنا جسم بیچنا شروع کر دوں گی۔ مجھے لگتا ہے کہ میں نے اپنی روح بھی شیطان کی ہاتھ بیچ دی ہے۔ میری خاوند کی وفات ہو چکی ہے ۔ میرے تین خوبصورت بچے ہیں لیکن اس کے باوجود میں ہیروئن کا انتخاب کیا۔ میں دوبارہ اپنے بچوں کی ماں بننا چاہتی ہوں لیکن ہر بار میں ہار جاتی ہوں اور ہیروئن جیت جاتی ہے۔

مجھے اس صورت حال سے نفرت ہے لیکن میں بے بس ہوں میںکچھ نہیں کر پاتی ۔ میرے بچوں کو میری بہت ضرورت ہے لیکن میں ان کے لیے کچھ بھی نہیں کر پارہی۔ میں ان کے پاس نہیں جا سکتی کیونکہ میرے لیے نشہ سب سے اہم ہے ۔

میں نے ایک بار ہیروئن استعمال کی اور پھر کبھی اسے چھوڑ نہیں پائی ۔ اب میرے لیے زندگی میں اس سے زیادہ کسی چیز کی اہمیت نہیں ہے ۔ ہیروین کا نشہ شروع کرنے کے چھ ماہ بعد ہی میں اپنے گھر اور بچوں سے دور ہو چکی تھی۔ درحقیقت میں سب کچھ ہی کھو چکی تھی۔ میں اپنی برباد زندگی کا واسطہ دے کر کہتی ہوں کہ کبھی کوئی اس نشے کو ہاتھ نہ لگائے ۔ آپ کچھ بھی کر لیں لیکن ہیروئن کو ہاتھ مت لگائیں کیونکہ یہ آپ کو مار ڈالے گی اور آپ کی زندگی ختم کرڈالے گی۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /برطانیہ