اوورسیز پاکستانیوں کی مشکلات میں کوئی کمی نہیں ہوئی، عبداللہ خان

اوورسیز پاکستانیوں کی مشکلات میں کوئی کمی نہیں ہوئی، عبداللہ خان

  

پشاور(سٹی رپورٹر) یوتھ منسٹر برائے اوورسیز پاکستانیز اور چیئرمین اورسیز رائٹ واچ عبداللہ خان نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ بار بار حکومت کے نوٹس میں لانے کے باوجود بیرون ملک پاکستانیوں کی مشکلات میں کوئی کمی نہیں ائی۔ قومی ائیرلائن کے ٹکٹس بلیک میں فروخت ہو رہے ہیں۔ حکومت فوری نوٹس لے۔ بھارت، افغانستان اور دیگر ممالک اپنے شہریوں کو واپس لانے کیلئے کم کرایوں پر اضافی پروازیں چلا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا جس طرح ملک کے دیگر شہروں کے ائیرپورٹس باقاعدہ کھول لئے گئے ہیں، اسی طرح حکومت کو صوبہ خیبر پختونخواہ کا واحد انٹرنیشنل ایئرپورٹ باچاخان ایئرپورٹ کو بھی بیرون ملک پروازوں کیلئے کھولنا چاہیے۔ اس سے پختون مسافر بھائیوں کی مشکلات میں کمی ائے گی۔ اور ان پر اضافی خرچوں کا بوجھ نہیں ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیز ہمارا فخر ہیں، انکو ترجیہی بنیادوں پر ہر ممکن سہولت دینا چاہیے۔ دبئی سے فیصل اباد لائے جانے والے پختون مسافروں کے ساتھ قرنطینہ میں ناروا سلوک کیا جا رہا ہے۔ اسی طرح کویت سے ملتان انے والے پختون مسافروں کی بھی شکایات ہیں۔ انہیں قرنطینہ سنٹرز میں سہولیات نہیں دی جا رہی ہیں، اور ناروا سلوک رکھا جا رہا ہے۔ ان کو ٹیسٹ رپورٹس کے بارے میں آگاہ نہیں کیا جا رہا۔ بہت سارے مسافر بھائی بہنیں اپنے پیاروں کے اخری دیدار کیلئے آنا چاہتے ہیں مگر تعاون نہ ہونے کی وجہ سے وہ محروم رہ جاتے ہیں۔ حکوت اس پر فوری نوٹس لے جبکہ کویت میں مکمل کرفیو کی وجہ سے وہاں موجود پاکستانی سفارتخانہ اپنے شہریوں کیلئے راشن اور دیگر سہولیات کی فراہمی یقینی بنائے۔ پاکستانی معیشت میں اہم کردار ادا کرنے والے بیرون ملک پاکستانی وہاں حکومتی امداد کے منتظر ہیں۔ وطن واپسی کیلئے ہزاروں پاکستانیوں نے رجسٹریشن کرائی ہے۔ حکومت ان کی بروقت واپسی کیلئے موثر پلان ترتیب دے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -