پشاور میں تعمیراتی سامان کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ

پشاور میں تعمیراتی سامان کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ

  

پشاور(سٹی رپورٹر)تعمیراتی شعبے کے لئے حکومتی مراعات کے اعلانات کے باوجود مارکیٹ میں تعمیراتی سامان کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ تشویشناکصورت اختیار کرتا جارہا ہے، قیمتوں میں آئے روز بے لگام اضافے سے ملک میں تعمیراتی شعبے کو ناقابل تلافی نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے۔زرائع کا کہنا ہے وزیر اعظم عمران خان کی حکومت نے ملک میں ہاوسنگ کی صنعت کو معیشت کے لئے ریڑھ کی ہڈی قرار دیتے ہوئے تعمیراتی شعبے کے لئے مراعات کا اعلان کیا تھا۔وزیر اعطم عمران خان  بارہا کہ چکے ہیں کہ تعمیراتی کاموں سے 72صنعتوں میں سرمایہ حرکت میں اجاتا ہے جس کے نتیجے میں مارکیٹ میں روزگار کے نئے مواقع پیدا ہونگے۔وزیر اعظم عمران خان نے اقتدار سنبھالتے ہی اس شعبے پر خصوصی توجپہ دینے کا اعلان کیا تھا، لیکن وزیر اعظم کے اعلانات  کے برخلاف تعمیراتی صنعت کے حالات ملک کے دیگر شعبوں سے زرا بھی مختلف نہیں نظر آتے۔ تعمیراتی انڈسٹری میں استعمال ہونے والے بنیادی اشیا سریا اور سمینٹ کی قیمت میں خوفناک اضافہ ہوچکا ہے۔اس وقت مارکیٹ میں سرئیے کی فی ٹن قیمت 135000سے بھی زیادہ ہے جبکہ سیمنٹ کی قیمت میں گزشتہ تین سال کے دوران تقریبا 100سے 120روپے فی بیگ اضافہ ہو اہے۔تعمیراتی شعبے سے وابستہ افراد نے اس صورتحال کو تشویشناک قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر حکومت ملک میں تعمیراتی شعبے کو مزید فعال بنانا چاہتی ہے تو فوری طور پر تعمیراتی کاموں میں استعمال ہونے والے آشیا کی قیمتوں میں کمی کرے،تاکہ کم آمدنی والے افراد بھی اپنی گھر کی تعمیر کے خواب کو پانے کے قابل 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -