تجاوزات کے نام پر بنوں کے تاجر وں کو تنگ کیا جا رہا ہے: زاہد اکرام درانی 

تجاوزات کے نام پر بنوں کے تاجر وں کو تنگ کیا جا رہا ہے: زاہد اکرام درانی 

  

 بنوں (نمائندہ خصوصی)ممبر قومی اسمبلی زاہد اکرم خان درانی نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت اور ضلعی انتظامیہ ناجائز تجاوزات کے نام پر بنوں کے تاجروں اور غریب لوگوں کو الاٹ شدہ دکانیں بغیر کسی نوٹس کے گراکر ظلم عظیم کررہی ہے وقت آنے پر ان سے ایک ایک پائی کا حساب لیا جائیگا کمشنر بنوں،ڈپٹی کمشنر بنوں اور ضلعی انتظامیہ تجاوزات کے نام پر لوگوں کو بیروزگار کرنے اور انہیں نقصان پہنچانے سے بازرہے ورنہ وقت آنے پر انہیں حساب دینا ہوگا بنوں کے عوام آج بروز سوموار حکومت اور ضلعی انتظامیہ کی جانب سے تجاوزات کے نام پر جائز دکانیں مسمار کرنے کے خلاف تاجر برادری کی ہڑتال اور احتجاج میں بھرپور شرکت کریں ان خیالات کا اظہار انہوں نے مزری اینڈ بانس مارکیٹ میں دکانداروں کو ضلعی انتظامیہ کی جانب سے دکانیں حالی کرانے کیلئے صرف تین گھنٹے کے نوٹس کے خلاف احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ مال منڈی،بکرا منڈی اور مزری منڈی سمیت دیگر علاقوں کے دکانداروں کو بغیر کسی قانونی نوٹس اور مناسب وقت دیئے دکانیں حالی کرنے کا کہا گیا ہے تین گھنٹوں میں زبانی احکامات پر تاجر اور دکاندرا دکانوں میں پڑا لاکھوں روپے کا مال کہاں لے جائیں گے اور تین گھنٹوں میں سینکڑوں دکانیں کس طرح حالی کئے جاسکتے ہیں انہوں نے کہا کہ غیر قانونی اور ناجائز تجاوزات وہ ہوتے ہیں جس پر کسی نے راتوں رات قبضہ کیا ہوا ہو لیکن مزری اینڈ بانس منڈی،بکرا منڈی اور مال منڈی کے دکانداروں کو باقاعدہ میونسپل کمیٹی نے دکانیں الاٹ کی ہیں اور نقشہ بھی دیا ہے یہ لوگ 50سالوں سے ٹی ایم اے بنوں کو کرائے بھی جمع کررہے ہیں آج یہ تاجر اور دکاندار قبضہ مافیا کیسے بنے؟انہوں نے کہا کہ اس ظلم کے خلاف ہم قومی اسمبلی میں بھی آواز اٹھائیں گے اور میرے والد اکرم خان درانی منگل کو صوبائی اسمبلی میں آواز اٹھائیں گے اور متاثرہ دکانداروں کو اس جگہ پر دکانیں الاٹ کرنے اور نقصانات کے ازالے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -