فوری ریلیف ورنہ حکومت کا یہ آخری بجٹ، عوام کا شدید ردعمل 

  فوری ریلیف ورنہ حکومت کا یہ آخری بجٹ، عوام کا شدید ردعمل 

  

  ملتان (سپیشل رپورٹر) مہنگائی نے ملکی تاریخ کے ریکارڈ توڑ دیئے،عام آدمی کیلئے دو وقت کی روٹی کا حصول نا ممکن ہوگیا،کرونا وباء کے باعث لاک ڈاؤن نے کاروبار تباہ کردئے،آئندہ مالی سال کا بجٹ حکمرانوں کی آزمائش ثابت ہوگا، عوام کے صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا، فوڈ(بقیہ نمبر1صفحہ6پر)

 سیکورٹی سمیت عام آدمی کو ریلیف اور مہنگائی پر قابو پانے بارے اقدامات نہ اٹھائے گئے تو یہ بجٹ موجودہ حکومت کا آخری بجٹ ہوسکتا ہے،مہنگائی کے ستائے عوام حکمرانوں کو گھر بھیجنے کیلئے سڑکوں پر ہونگے،حکومت بجٹ میں مہنگائی میں کمی لانے کے ساتھ ساتھ باعزت روز گار کے مواقع پیدا کرنے کا اعلان کرے ان خیا لات کا اظہار مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے شہری حلقوں نے "پاکستان پری بجٹ "کے حوالے سے منعقدہ موبائل فورم  سے اظہا ر خیا ل کرتے ہوئے کیا۔پاکستان پری بجٹ موبائل فور م میں اظہار خیا ل کرتے ہوئے خرم عظیم نے کہا کہ پی ٹی آئی دور حکومت میں جتنی مہنگائی ہوئی ہے اتنی پوری زندگی میں نہیں دیکھی،مہنگائی نے تاریخ کے تما م ریکارڈ توڑ دیئے ہیں جس کے باعث عام آدمی کا گزارہ اب بہت مشکل ہوگیا ہے۔انھوں نے کہا کہ آئندہ مالی سال کا بجٹ حکومت کیلئے آزمائش ہے اگر اس میں عام آدمی کو ریلیف نہ ملا تو یہ بجٹ اس حکومت کا آخری بجٹ ہوسکتا ہے۔ملک شبیر چوہان نے کہا کہ ضروریات زندگی کی اشیاء جن میں گھی،چینی،آٹا،دالیں،گوشت وغیرہ کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں اور ان میں 100فیصد سے زائد اضافہ ہوچکا ہے انھوں نے کہا کہ حکومت کو چاہیے کہ وہ یوٹیلٹی سٹور،سہولت بازاروں کیلئے پیکچ اناؤنس کرنے کی بجائے ڈپوسسٹم کا نظام دوبارہ رائج کرے جہاں عام اور تنخواہ دار طبقہ کو راشن کارڈ کے زریعے اشیاء خورونوش سستے داموں فراہم کی جائیں،ملک محمد نواز نے کہا کہ کرونا وباء کے باعث کاروبار تباہ ہوچکے ہیں حکومت کو چاہیے کہ وہ بجٹ میں عام آدمی کیلئے روز گار کے مواقع پیدا کرنے بارے پروگرام لائے اور اس پر عملدرآمد کو یقنی بنایا جائے۔حاجی شرافت،محمد شیروز،محمد زین،لالو قریشی،حاجی لیاقت،محمد اعجاز،کامران،محمود شاہ،سیلمان شاہ،عاقب منیر،محمد حسن،نوید احمد،یامین نور،علی حسن،جنید احمد،محمد شہزاد،کامران،چوہدری مزمل ودیگر نے اپنے ملے جلے ردعمل کا اظہا ر کرتے ہوئے کہا کے مہنگائی نے عام آدمی سے دو وقت کا نوالہ چھین لیا ہے جا کے باعث عام آدمی کے صبر کا پیمانہ اب لبریز ہوچکا ہے انھوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے مالی سال2021-22ء کے بجٹ میں فوڈ سیکورٹی سمیت عام آدمی کو ریلیف اور مہنگائی پر قابو پانے بارے اقدامات نہ اٹھائے گئے تو یہ بجٹ موجودہ حکومت کا آخری بجٹ ثابت ہوسکتا ہے کیونکہ مسائل اور مہنگائی کے ستائے عوام حکمرانوں کو گھر بھیجنے کیلئے سڑکوں پر ہونگے،حکومت بجٹ میں مہنگائی میں کمی لانے کے ساتھ ساتھ باعزت روز گار کے مواقع پیدا کرنے کا اعلان کرے تاکہ عام آدمی کو ریلیف مل سکے۔

گفتگو

مزید :

ملتان صفحہ آخر -