بوریوالا میں قتل وغارت، دو ملزم گرفتار، تحقیقات شروع

بوریوالا میں قتل وغارت، دو ملزم گرفتار، تحقیقات شروع

  

بوریوالا(تحصیل رپورٹر)تھانہ صدر پولیس نے دوران ڈکیتی مقامی وکیل محمد عرفان نذیر کو قتل کرنے والا ملزم جبکہ تھانہ ماڈل ٹان پولیس نے صحافی کے بیٹے کے قتل (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

میں ملوث دو ملزمان بھی گرفتار کر لئے،دوران ڈکیتی اندھے قتل کا ملزم عدیل ڈکیتی اور راہزنی کی متعدد وارداتوں میں بھی ملوث ہے اس امر کا انکشاف ڈی ایس پی حاجی محمد اشرف تبسم نے اپنے دفتر میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا پریس کانفرنس میں ضلعی صدر انجمن تاجران محمد جمیل بھٹی،چاچا ملک محمد اسلم،چوہدری صغیر رامے،شیخ عابد فاروق،شیخ محمد اعظم،عرفان گجر،چوہدری محمد عاطف،چوہدری ذوالفقار احمد،میاں محمد اشرف،حاجی محمد ارشد،ایس ایچ او تھانہ صدر چوہدری محمد نوید وڑائچ،ایس ایچ او تھانہ سٹی محمد کبیر خاں،ایس ایچ او تھانہ گگومنڈی محمد شمعون جوئیہ اور دیگر پولیس افسران بھی موجود تھے ڈی ایس پی حاجی محمد اشرف نے بتایا کہ 24 اپریل کو مقامی بار کے وکیل چوہدری عرفان نذیر انکے بھٹہ خشت پر دوران ڈکیتی فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھا اور اپنے ایک سہولت کار ارشد نائی حمام والا معصوم شاہ روڈ کے ہمراہ سندھ میں کچے کے علاقہ میں فرار ہو گیا تھا جسے ڈی پی او وہاڑی زاہد نواز مروت کی ہدایت پر ایس ایچ او صدر اور انکی ٹیم نے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کرتے ہوئے بڑی مہارت سے گرفتار کر لیا ہے ملزم عدیل ڈکیتی اور راہزنی کی 6 سے زائد وارداتوں میں بھی ملوث ہے جبکہ تھانہ ماڈل ٹان پولیس نے ایس ایس ایچ او جہانگیر مترو،انچارج انوسٹی گیشن سب انسپکٹر محمد مجاہد بلوچ اور انکی ٹیم نے بورے والا کے سینئر صحافی اصغر علی جاوید (کامریڈ) کے بیٹے 16 سالہ فیضان کو 25 اپریل کو انکے گھر کے قریب ایک مسلح تنظیم کے ملزمان بلال ٹھاکر اور رانا لیاقت نے معمولی رنجش پر فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھا جسکا ایک ملزم بلال پولیس نے پہلے گرفتار کر لیا تھا جبکہ دوسرا ملزم رانا لیاقت ضمانت خارج ہونے کے بعد فرار ہو گیا تھا اسے بھی پولیس نے گذشتہ روز گرفتار کر لیا ہے ڈی ایس پی کے مطابق گرفتار کئے گئے ملزموں کو پولیس کیفر کردار تک پہنچائے گی اور شہر میں اسلحہ کی فروانی کو روکنے کیلئے ایک موثر آپریشن کر کے ان سماج دشمن عناصر کو بھی گرفتار کر کے شہر کو اسلحہ سے پاک کیا جائے گا اس میں سول سوسائٹی اور شہریوں کو بھی بھرپور تعاون کرنا ہو گا پریس کانفرنس میں ڈی ایس پی نے انکشاف کیا کہ تھانہ گگومنڈی پولیس نے مویشی چوروں کے گروہ کے چار ارکان کو گرفتار کر کے انکے قبضہ سے 60 لاکھ سے زائد مالیت کے مویشی برآمد کر لئے جبکہ تھانہ گگومنڈی پولیس نے ڈکیتی،چوری اور راہزنی کی متعدد وارداتوں میں ملوث جرائم پیشہ گروہ کے سرغنہ ابرار بلوچ اور اسکے دو ساتھیوں محمد ظہیر اور علی رضا کو گرفتار کر کے انکے قبضہ سے 90 ہزار روپے سے زائد نقدی،موٹر سائیکل اور ناجائز اسلحہ بھی برآمد کر لیا ہے۔

تحقیقات شروع

مزید :

ملتان صفحہ آخر -