خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے 16 افراد کے خلاف فوجی عدالتوں میں کارروائی کی منظوری

خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے 16 افراد کے خلاف فوجی عدالتوں میں کارروائی کی ...
خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے 16 افراد کے خلاف فوجی عدالتوں میں کارروائی کی منظوری

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) حکومت نے خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے 16 افراد کے خلاف فوجی عدالتوں میں مقدمہ چلانے کی منظوری دے دی۔ 

جیو نیوز کے مطابق جن افراد کے خلاف فوجی عدالتوں میں کارروائی کی منظوری دی گئی ہے ان پر عمران خان کی گرفتاری کے بعد ہونیوالے احتجاج کے دوران فوجی تنصیبات پر حملے کرنے کا الزام ہے، ملزمان میں سے 4 کا تعلق مالاکنڈ جبکہ شاہ زیب اور رحمت اللہ سمیت 6 کا تعلق مردان سے ہے۔ 

دوسری جانب اقوام متحدہ کے ادارہ برائے انسانی حقوق کے سربراہ وولکر ترک نے 9 مئی کو توڑ پھوڑ میں ملوث شہریوں کے خلاف آرمی ایکٹ کے تحت مقدمہ چلانے کے فیصلےکوانسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی قرار دیا ۔

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے سربراہ نے کہا کہ پاکستان کا فوجی عدالتوں کو بحال اور اسے سیاسی کارکنان کیخلاف استعمال کرنے کا منصوبہ افسوسناک و پریشان کن ہے، پاکستان کی موجود صورت حال میرے لیے گہری تشویش کا باعث ہے، جہاں ان دنوں قانون کی حکمرانی کو شدید خطرات لاحق ہیں۔

مزید :

قومی -