یورپی ملک کے وزیر نے فرانس حملوں کے بارے میں ایسا اعلان کر دیا کہ اسرائیل کو مرچیں لگ گئیں

یورپی ملک کے وزیر نے فرانس حملوں کے بارے میں ایسا اعلان کر دیا کہ اسرائیل کو ...
یورپی ملک کے وزیر نے فرانس حملوں کے بارے میں ایسا اعلان کر دیا کہ اسرائیل کو مرچیں لگ گئیں

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

سٹاک ہوم (نیوز ڈیسک) اسرائیل کو بدترین جرائم کے باوجود مغرب سے ہمیشہ حمایت ہی ملتی رہی ہے لیکن سویڈن کی وزیر خارجہ نے پیرس میں ہونے والی دہشت گردی کے بعد ایک ایسی بات کہہ دی کہ اسرائیل میں طوفان برپا ہوگیا ہے اور اسرائیلی حکومت کبھی احتجاج کر تی اور کبھی سویڈن کے سفارتکاوں کو بلا کر وضاحتیں طلب کرتی نظر آتی ہے۔

سویڈن کے سرکاری نشریاتی ادارے نے وزیر خارجہ مارگٹ وال سٹروم سے شدت پسندی کی طرف مائل ہوتے نوجوانوں کے متعلق سوال کیا تو ان کا کہنا تھا کہ یہ بات تشویشناک ہے کہ سویڈن ہی نہیں بلکہ دنیا بھر میں نوجوان شدت پسندی کی طرف مائل ہورہے ہیں۔ انہوں نے مثال کے طور پر مشرق وسطیٰ کا ذکر کیا کہ جہاں فلسطینی نوجوان اسرائیلی استبداد کے شکار ہیں۔ ان کا کہنا تھا ”فلسطینیوں کو اپنا کوئی مستقبل نظر نہیں آتا۔ یا تو وہ ایک انتہائی مایوس کن صورتحال کو قبول کرلیں، یا پھر تشدد کا راستہ اختیار کریں۔“

مزید جانئے: داﺅد ابراہیم پاکستانی خفیہ ایجنسیوں کی حفاظت میں ہے ،سابق بھارتی پولیس کمشنر نے پھر الزام لگا دیا

سویڈن کی وزیر خارجہ کے بیان کے بعد اسرائیلی حکام کا تو گویا چین ہی غارت ہوگیا ہے کیونکہ وہ یہ توقع ہرگز نہیں کررہے تھے کہ کوئی یورپی ملک فلسطینیوں کے حق میں اسرائیلیوں کے خلاف اس طرح کھل کر بیان دے گا۔ اسرائیل میں سویڈن کے سفیر کو بلا کر احتجاج بھی کیا گیا ہے اور وزیر خارجہ کے بیان پر وضاحت بھی طلب کی گئی ہے۔ اسرائیلی وزارت خارجہ کے حکام نے تو سویڈن کی وزیر خارجہ پر یہ الزام بھی لگا دیا ہے کہ وہ اسرائیل کی دشمن ہیں اور ہمیشہ اسرائیل مخالف بات ہی کرتی ہیں۔

مزید : بین الاقوامی