پنجاب میں گزشتہ 6سالوں کے پولیس مقابلوں کا ریکارڈ طلب

پنجاب میں گزشتہ 6سالوں کے پولیس مقابلوں کا ریکارڈ طلب

لاہور(زاہد علی خان)وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کے حکم پر پنجاب میں گزشتہ 6سال کے دوران ہونے والے مبینہ پولیس مقابلوں کا ریکارڈٖ جمع کیا جا رہا ہے۔ذرائع کے مطابق وزیر داخلہ نے کہا ہے کہ اطلاعات کے مطابق پولیس نے جعلی مقابلے بھی کیے اور ان میں سنگین جرائم میں ملوث لوگوں کو پار کیا انہوں نے کہا کہ ان الزاما ت کی تحقیقات ہونی چاہیں اور جولوگ ان مقابلوں میں ملوث ہیں ان کے خلاف عدالتی کارروائی ہونی چاہیے۔بتایاگیا ہے کہ سابق دور حکومت اور موجودہ دور میں بھی ایسے مقابلوں کیلئے چن کر پولیس افسر لگائے گئے جو مقابلوں کے ماہر تھے اور انہوں نے لگ بھگ 170سے زائد افراد کو مقابلوں میں پار کیا جن کی تحقیقات کا حکم دیا گیا ہے۔ذرا ئع نے مزید بتایا کہ ان مبینہ پولیس مقابلوں میں ایسے جرائم پیشہ افراد بھی مارے گئے جو مبینہ طورپر پولیس کی حراست میں تھے مگر پولیس نے بعض بڑے پولیس افسران سے مل کر اگرچہ ان کی تحقیقات بھی کرائیں مگر رزلٹ پولیس کے حق میں دیا گیا۔ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ بعض پولیس افسروں نے جرائم کو ختم کرنے کیلئے مبینہ پولیس مقابلے کیے ۔ذرائع نے مزید بتایا کہ لاہور میں جن پولیس مقابلوں کا ذکر کیا گیا ہے ان میں بیشتر ’’جعلی‘‘تھے بتایا گیا ہے کہ اس حوالے سے سابقہ ریکارڈ اور ان پولیس افسروں کے نام بھی طلب کیے گئے ہیں جو ان پولیس مقابلوں میں شریک تھے۔

پولیس مقابلے

مزید : صفحہ آخر