انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کا بابری مسجد فیصلہ کے خلاف مظاہرہ

انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کا بابری مسجد فیصلہ کے خلاف مظاہرہ

  



لاہور(پ ر)انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے زیراہتمام 27نومبرکوہائیکورٹ چوک میں بابری مسجد کی شہادت کے کئی برسوں بعدبھارتی سپریم کورٹ کی انصاف گردی، کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین خلاف ورزیوں اور کشمیریوں کی مسلسل نسل کشی اورکاشانہ ویلفیئرہوم میں سی ایم آئی ٹی کے منتقم مزاج چیئرمین کی مسلسل اوربیجاانتقامی مداخلت کیخلاف پرامن احتجاجی مظاہرہ ہوگا۔امن اورانسانیت کے حامی قلم کاراورقانون دان بھی اس منفرد مظاہرے میں شریک ہوں گے جبکہ کشمیرکی آئینی پوزیشن کی بحالی اوربابری مسجدکی تعمیرنو کے حق میں قرارداد بھی پیش کی جائے گی۔

اس امرکافیصلہ مرکزی سینئر نائب صدر تنویرخان کی زیرصدارت اعلیٰ سطحی اجلاس میں کیا گیا۔اجلاس میں مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان،چیف آرگنائزراشفاق احمدکھرل ایڈووکیٹ،سینئر نائب صدرمخدوم وسیم قریشی ایڈووکیٹ،نائب صد ر سلمان پرویزاورایڈیشنل سیکرٹری جنرل سلطان حسن بٹ شریک ہوئے۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے تنویرخان اوردوسرے مقررین نے کہا ہے کہ بھارت نے سات دہائیوں سے اپنے ہاتھوں سے کشمیریوں کی راہوں میں جوکانٹے بچھائے ہیں وہ عنقریب مودی اوراس کے حواریوں کو اپنی آنکھوں سے اٹھاناپڑیں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1