معاون اور اصلت کا موریطانیہ کی بندر گاہ نواکشوط کا دورہ

  معاون اور اصلت کا موریطانیہ کی بندر گاہ نواکشوط کا دورہ

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاک بحریہ کے بحری جہازوں پی این ایس معاون اورپی این ایس اصلت نے افریقی ممالک میں تعیناتی کے تحت موریطانیہ کے شہر نواکشوط کا دورہ کیا۔موریطانیہ آمد پر موریتانیہ بحریہ کی جانب سے پاک بحریہ کے بحری جہازوں کا پرُ جوش استقبال کیا گیا۔ مشن کمانڈر نے پاک بحریہ کے بحری جہازوں کے کمانڈنگ آفیسر زکے ہمراہ چیف آف میرین اسٹاف موریتانیہ نیوی، موریتانیہ مسلح افواج کے چیف آف ڈیفنس فورسز اور نواکشوط کی ریجنل کونسل کے صدر سے ملاقاتیں کی۔ملاقاتوں کے دوران مشن کمانڈر نے چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی کی جانب سے موریتانیہ کی عوام اوربا لخصوص موریتانیہ نیشنل نیوی کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔ دونوں اطراف سے دونوں ممالک کے مابین برادرانہ تعلقات میں مزید وسعت اور اضافے کے عزم اور خواہش کا اظہار کیا گیا۔ مشن کمانڈر نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی قربانیوں اور عالمی مفاد میں میری ٹائم سیکورٹی اور تحفظ کو یقینی بنانے میں پاک بحریہ کے کردار کو بھی اجاگر کیا۔ مشن کمانڈر نے اپنے دورے کے دوران پاکستان نیوی کے جہازوں کے لئے موریتانیہ حکام کی جانب سے فراہم کردہ تعاون پر اظہار تشکر کیا۔مزید براں، موریتانیہ کے مختلف حکام کے ساتھ متعدد ملاقاتیں بھی کی گئیں جن میں موریتانیہ کے عوام کے لئے برادرانہ جذبات کا بھر پور اظہار کیا گیا۔ جذبہ خیر سگالی کے تحت پاک بحریہ کے ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل ٹیم کی جانب سے بندر گاہ کی حدود میں تین روز ہ مفت طبی کیمپ بھی قائم کیا گیا۔ کیمپ میں 2000سے زائد مقامی مریضوں کو مفت طبی سہولیات اور ادویات فراہم کی گئیں۔چند مریضوں کا علاج جدید ترین طبی سہولیات سے آراستہ پاک بحریہ کے بحری جہاز معاون پرکیا گیا۔ پاک بحریہ کی جانب سے طبی کیمپ کے قیام کو مقامی آبادی نے بے حد سراہا جس سے مقامی آبادی میں پاکستان نیوی کے بارے میں خیر سگالی کے جذبات کو فروغ ملا۔پاک بحریہ کے بحری جہاز معاون پر عشائیے کا اہتمام بھی کیا گیا جس میں موریتانیہ نیوی کے سینئر افسران،غیر ملکی سفراء اور معروف مقامی شخصیات کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ اس موقع پر مشن کمانڈر نے مقبوضہ کشمیر میں خراب صورتحال، معصوم لوگوں پر بھارتی مقبوضہ فورسز کے مظالم، کشمیری عوام کی حالت زار اور کشمیریوں کی حق و انصاف کی جدوجہد میں پاکستانی عوام کی مسلسل حمایت کے بارے میں معزز شخصیات کو آگاہ کیا۔ پاک بحریہ کے بحری جہازوں کی حالیہ تعیناتی کا مقصد افریقی ممالک کے ساتھ دوستانہ تعلقات، بحری تعاون اور میزبان بحری افواج کے ساتھ باہمی آپریشنل تیاریوں میں مزید اضافہ ہے۔

مزید : صفحہ آخر