"حکومت کو بتادیا تھا اپوزیشن کی زبان بندنہیں ہوگی، مولانا کوبھی کہہ دیا تھاکہ ۔ ۔ ۔ " پرویز الٰہی ایک مرتبہ پھر بول پڑے

"حکومت کو بتادیا تھا اپوزیشن کی زبان بندنہیں ہوگی، مولانا کوبھی کہہ دیا ...

  



لاہور(ویب ڈیسک)سپیکر پنجاب اسمبلی اور مسلم لیگ (ق) کے رہنما چوہدری پرویز الٰہی نے کہا ہے کہ پہلے دن ہی مولانا کو کہہ دیا تھا کہ وزیراعظم مستعفی ہونگےنہ ہی اسمبلیاں تحلیل ہونگی، حکومت کو بھی بتا دیا تھا کہ دھرنا ختم ہونے کے بعد اپوزیشن کی زبان بند نہیں ہوگی ۔انہوں نے یہ بات جے یو آئی رہنما کےعبدالغفور حیدری کے اس بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے کہی جس میں انہوں نے دعویٰ کیا تھا کہ ہم ویسے ہی اسلام آباد سے نہیں گئے ہمیں یقین دہانیاں کرائی گئی ہیں اور ہمیں چوہدری برادران پر اعتماد ہے، وزیراعظم کا استعفیٰ بھی آئے گا اور اسمبلیاں بھی تحلیل ہوں گی۔

روزنامہ جنگ کے مطابق سپیکر پنجاب اسمبلی نے کہا کہ حکومت اور اتحادی جماعتیں ایک پیج پر ہیں اور ملک کو معاشی بحران سے نکالنے کے لیے متفقہ حکمت عملی پر عمل کر رہے ہیں۔خیال رہے کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے آزادی مارچ کے دوران ق لیگ کے رہنماؤں چوہدری پرویز الٰہی اور چوہدری شجاعت حسین سے مذاکرات کے متعدد دور کیے تھے اور پھر 14 روز سے اسلام آباد میں جاری دھرنا 13 نومبر کو ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور