برطانیہ کے شہزادے پر خاتون نے انتہائی شرمناک الزام لگادیا

برطانیہ کے شہزادے پر خاتون نے انتہائی شرمناک الزام لگادیا
برطانیہ کے شہزادے پر خاتون نے انتہائی شرمناک الزام لگادیا

  



لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) ملکہ برطانیہ نے گزشتہ دنوں شہزادہ اینڈریو کو بکنگھم پیلیس طلب کرکے انہیں معطل کر دیا اور ان سے تمام تر شاہی ذمہ داریاں واپس لے لیں۔ شہزادہ اینڈریو کوامریکہ کے کاروباری شخص جیفرے ایپسٹین کے ساتھ دوستی کی وجہ سے معطل کیا گیا جسے بچوں کے ساتھ جنسی زیادتیوں اور بچوں کی سمگلنگ کے جرائم میں سزا سنائی گئی تھی۔ اب جیفرے کی درندگی کا نشانہ بننے والی ایک خاتون نے شہزادہ اینڈریو پر بھی انتہائی شرمناک الزام عائد کر دیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق شاﺅنٹی ڈیویس نامی اس خاتون کی عمر اب 40سال ہے۔ اسے بھی جیفرے نے کم عمری میں اپنی درندگی کا نشانہ بنایا تھا۔ شاﺅنٹی نے کہا ہے کہ جیفرے بچوں میں جنسی رغبت رکھنے والے لوگوں کی پارٹیاں منعقد کرتا تھا۔ ان پارٹیوں میں جیفرے کئی کم عمر لڑکیوں کو بھی مدعو کرتا۔ ان میں سے کئی پارٹیوں میں شہزادہ اینڈریو بھی شریک ہوتا تھا اور اکثر کم عمر لڑکیوں کے ساتھ فحش حرکات کرتا تھا۔ ایک بار اس نے میری چھاتیوںپر بھی رس بھریاں پھینک دی تھیں۔ یہ پارٹی جیفرے کے کیریبین آئی لینڈ پر واقع عالیشان گھر میں ہو رہی تھی۔

شاﺅنٹی نے بتایا کہ ”اپنے اسی گھر میں جیفرے نے مجھے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔ اس وقت میری عمر 21سال تھی۔ ایک بار مجھے ایک اور لڑکی نے بتایا کہ شہزادہ اینڈریو اسے موٹربوٹ پر سمندر کی سیر پر لے کر گیا تھا جہاں انہوں نے جنسی تعلق قائم کیا تھا۔ جیفرے کے گھر میں شہزادہ اینڈریو کی تصاویر لگی ہوتی تھیں اور وہ کئی کم عمر لڑکیوں کو شہزادہ اینڈریو سے ملوانے کے بہانے ہی اپنے چنگل میں پھانستا تھا۔وہ لڑکیوں کے سامنے شیخیاں بگھارتا کہ شہزادہ اس کا کتنا قریبی دوست ہے۔ وہ یہ بھی بتاتا کہ کس طرح اس نے شہزادہ اینڈریو کی اہلیہ کو رقم بھی ادھار دی تھی۔ “ شاﺅنٹی کا کہنا تھا کہ ”جیفرے اور شہزادہ اینڈریو واقعی بہت گہرے دوست تھے اور یہ ممکن ہی نہیں کہ شہزادہ اینڈریو اس کی سرگرمیوں سے واقف نہ ہو، بلکہ میں عینی شاہد ہوں کہ شہزادہ اینڈریو خود ان سرگرمیوں میں جیفرے کے ساتھ شریک ہوتا تھا۔“ واضح رہے کہ جیفرے ایپسٹین نے جیل سے رہا ہونے کے بعد رواں سال اگست میں خودکشی کر لی تھی۔ شہزادہ اینڈریو نے جیفرے پر بچوں کو جنسی زیادتی کے جرائم ثابت ہو جانے کے بعد بھی اس کے ساتھ دوستی برقرار رکھی اور اس سے ملتا جلتا رہا۔ انہی الزامات کی بنیاد پر ملکہ برطانیہ نے انہیں شاہی ڈیوٹی سے معطل کر دیا۔

مزید : برطانیہ