نواز شریف کی والدہ کی میت جمعرات کو لندن سے لاہور روانہ کیے جانے کا امکان، اسحاق ڈار کا عمران خان کی طرف سے تعزیت کا خیر مقدم

نواز شریف کی والدہ کی میت جمعرات کو لندن سے لاہور روانہ کیے جانے کا امکان، ...
نواز شریف کی والدہ کی میت جمعرات کو لندن سے لاہور روانہ کیے جانے کا امکان، اسحاق ڈار کا عمران خان کی طرف سے تعزیت کا خیر مقدم

  

لندن (ویب ڈیسک) مسلم لیگ (ن) کے رہنما و سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کی والدہ بیگم شمیم اختر کی میت جمعرات کو لندن سے لاہور روانہ کیے جانے کا امکان ہے،اسحاق ڈار کاکہنا تھا کہ ضروری کاغذات کل تک تیار ہونے کا امکان ہے اور صورتحال آج واضح ہو جائے گی۔عمران خان اور آرمی چیف کی طرف سے تعزیت کے بارے میں سوال پر اسحاق ڈار کا کہناتھاکہ جو بھی  مسلمان دنیا سے رخصت ہو، اس کی تعزیت کرنی چاہیے ، انہوں نے کی ہے تو اچھی بات ہے ۔ 

روزنامہ جنگ کے مطابق مرحومہ کے خاندانی ذرائع کا کہنا ہے کہ بیگم شمیم اختر کا ڈیتھ سرٹیفکیٹ آج یا کل تک ملنے کا امکان ہے، بیگم شمیم اختر کی میت گزشتہ روز ریجنٹ پارک مسجد کے سرد خانے میں منتقل کردی گئی تھی۔

اس سے قبل ایون فیلڈ آفس کے باہر میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ بیگم شمیم اختر کی میت کی روانگی کے لیے ضروری کاغذات کل تک تیار ہو نے کا امکان ہے  ، بدھ کی شام تک ساری صورتحال واضح ہوجائے گی، جمعرات تک وقت لگ سکتا ہے،انہوں نے کہا کہ برطانیہ میں میت کو بھیجنے کے حوالے سے ایک پراسس ہے اس کی تکمیل کا انتظار ہے ۔

 اسحاق ڈار نے بتایا کہ نواز شریف کی والدہ کافی عرصے سے علیل تھیں لیکن کچھ دنوں سے وہ بہت زیادہ بیمار اور کمزور ہوگئی تھیں، ڈاکٹرز نے بتایا کہ ان کا شاید ایک پھیپھڑا ٹھیک سے کام نہیں کر رہا میاں صاحب کیلئے بہت ہی تکلیف کا مقام ہے، ان کے والد صاحب کی سعودی عرب، بیوی اور والدہ کا یہاں انتقال ہوا ہے۔

دوسری طرف برطانوی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ  سابق وزیر اعظم نواز شریف کی والدہ کا ڈیتھ سرٹیفیکٹ اور دوسری دستاویزات مکمل کرنے میں دو سے تین دن کا وقت لگ جائے گا جس کے بعد ان کی میت تدفین کے لیے لاہور روانہ کی جائے گی،لاہورروانگی سےقبل مرحومہ شمیم اختر کی نماز جنازہ مرکزی لندن کے ریجنٹ اسلامک سینٹر میں بھی ادا کی جائے گی جہاں سابق وزیر اعظم نواز شریف اور خاندان کےدیگر قریبی مرد حضرات شرکت کریں گے۔میاں نواز شریف اور شہباز شریف کی ہمشیرہ کوثر اپنی والدہ بیگم شمیم اختر کی میت کو لے کر اگلے دو سے تین روز میں لندن سے پاکستان روانہ ہوں گی۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز سابق وزیر اعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف اور سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی والدہ بیگم شمیم اختر لندن میں انتقال کرگئی تھیں۔خاندانی ذرائع کے مطابق بیگم شمیم اخترکے سینے میں شدید انفیکشن ہوگیا تھا، انھیں الزائمر کی بیماری بھی لاحق تھی۔سابق وزیراعظم ان دنوں لندن میں علاج کیلئے مقیم ہیں جبکہ شہباز شریف جیل میں قید ہیں اور ان کی پیرول پر رہائی کیلئے درخواست دے دی گئی ہے۔

مزید :

برطانیہ -