پاورپراجیکٹس میں غیر معمولی تاخیر : سپریم کورٹ کے سابق وزیرقانون اور سیکرٹری قانون کو نوٹس

پاورپراجیکٹس میں غیر معمولی تاخیر : سپریم کورٹ کے سابق وزیرقانون اور سیکرٹری ...
پاورپراجیکٹس میں غیر معمولی تاخیر : سپریم کورٹ کے سابق وزیرقانون اور سیکرٹری قانون کو نوٹس

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ نے نندی پور اور چیچوں کی ملیاں پاورپراجیکٹ میں غیر معمولی تاخیر پر سابق وزیرقانون ڈاکٹر بابراعوان اور سیکرٹری قانون مسعود چشتی کونوٹس جاری کردیئے ہیں اور اپنے ریمارکس میں کہاکہ پراجیکٹ کی تاخیر کے باعث قومی خزانے کو 113ارب روپے کا نقصان ہوچکاہے ۔چیف جسٹس کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے نندی پور اور چیچوں کی ملیاں پاور پراجیکٹ میں تاخیرسے متعلق کیس کی سماعت کی ۔ مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی خواجہ آصف نے عدالت کو بتایاکہ دونوں منصوبوں سے 975میگاواٹ بجلی پیدا ہونی تھی ،مزید دوسال شامل کریں تو نقصان 150ارب سے زائد ہے جس پر چیف جسٹس نے خواجہ آصف سے استفسار کیاکہ آپ معاملے کو پارلیمنٹ میںکیوں نہیں اُٹھاتے ۔خواجہ آصف نے کہاکہ پارلیمنٹ کو ایگزیکٹو نے یرغمال بنارکھاہے ۔چیف جسٹس نے فریقین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ریمارکس میں کہاکہ عرصے سے یہ کیس چل رہاہے ، اب ہم اسے فائنل کریں گے،بیوروکریٹک رویہ کی وجہ سے یہ سب کچھ ہورہاہے۔

مزید : بزنس