لاک ڈاؤن بغاوت ہے ، عمران خان نے منی لانڈرنگ اور ٹیکس ریٹرن پر فراڈ کیا :محمد زبیر

لاک ڈاؤن بغاوت ہے ، عمران خان نے منی لانڈرنگ اور ٹیکس ریٹرن پر فراڈ کیا :محمد ...

  

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) مسلم لیگ ن کے رہنماء محمد زبیر نے کہا کہ عمران خان نے اسلام آباد کو لاک کرنے کا فیصلہ کیا ہے، عمران چاہتے ہیں قوم باہر نکلے اور احتساب ہو اور کرپشن ختم ہو۔ محمد زبیر نے کہا کہ عمران دوسروں پر انگلی اٹھانے سے پہلے اپنا دامن بھی صاف رکھیں۔ محمد زبیر نے مزید کہا کہ عمران نے جو مالی بدعوانیاں کیں قوم کو ان سے آگاہ کرنا چاہتے ہیں۔ محمد زبیر نے دعویٰ کیا کہ عمران نے منی لانڈرنگ کیسے کی، ثبوتوں کیساتھ بتائیں گے اور اس بات کے بھی ثبوت دیں گے کہ ٹیکس ریٹرن پر عمران نے کس طرح فراڈ کیا۔محمد زبیر نے پریس کانفرنس کے دوران صحافیوں کو عمران کے نام پر بے نامی ٹرانزیکشن کے سرٹیفکیٹ بھی دکھائے اور کہا کہ اب عمران قوم کو بے نامی ٹرانزیکشنز کے متعلق کس منہ سے لیکچر دے رہے ہیں۔ رہنماء مسلم لیگ نون کا کہنا تھا کہ عمران خان کو ان سوالوں کے جواب دینے ہوں گے۔ انہوں نے اعلان کیا کہ میں عمران خان کے پیچھے جاؤں گا۔ محمد زبیر نے یہ بھی کہا کہ عمران یہ ثبوت دیکھنے کے بعد یہی کہیں گے کہ حکومت مجھے پکڑ لے۔ انہوں نے کہا کہ 1983ء میں عمران نے نیازی لمیٹڈ سروس کے نام پر آف شور کمپنی بنائی، عمران نے ایک سال تک کمپنی کا ٹیکس ریٹرن میں ذکر نہیں کیا۔ محمد زبیر نے کہا کہ عمران نے کالا دھن چھپانے کے لئے کمپنی بنائی۔محمد زبیر نے کہا کہ عمران نے 83 میں 20 ہزار پاؤنڈ کا فلیٹ خریدا، 1889ء تک عمران نے ٹیکس ریٹرن میں کمپنی کو چھپا کر رکھا، عمران نے کمپنی کو 2000ء4 میں شو کیا جب مشرف حکومت نے کالے دھن کو سفید کرنے والی سکیم نکالی تھی۔محمد زبیر کا کہنا تھا کہ عمران نے مشرف کی سکیم کے تحت کالے دھن کو سفید کر لیا، عمران پہلے پلاٹ خود خریدتے پھر جمائما کے نام کر دیتے تھے، بیوی واپس ان کے نام کرتی تو عمران اس کو گفٹ قرار دے دیتے۔انہوں نے کہا کہ 2005ء میں جمائما نے بنی گالہ کا گھر ان کے نام کر دیا تھا، بنی گالا والے گھر پر عمران نے گفٹ شو کر کے آج تک ٹیکس نہیں دیا۔ محمد زبیر نے یہ بھی کہا کہ بے نامی اکؤنٹس پر لیکچر دینے والا جواب دے کہ اس نے بے نامی ٹرانزیکشن کیوں کی۔ محمد زبیر نے کہا کہ عمران جہاد کرنے نکلے ہیں تو سوالوں کے جواب دیں، عمران نے اتنا بڑا گھر اپنے نام کروایا، ٹیکس نہیں دیا، 2014ء میں گرینڈ ہائٹ میں عمران نے فلیٹ بک کرایا لیکن الیکشن کمیشن کو دی گئی دستاویزات میں فلیٹ کا ذکر نہیں کیا۔ محمد زبیر نے کہا کہ ہم ساتھ ہر چیز کی رسیدیں بھی دکھا رہے ہیں۔ محمد زبیر نے کہا کہ الیکشن کمیشن میں انہیں ان تمام سوالات کے جواب دینے پڑنے تھے جس وجہ سے وہ اسلام آباد بند کرنے آ رہے ہیں۔محمد زبیر نے دعویٰ کیا کہ لاک ڈاؤن کی آئین میں اجازت نہیں، یہ بغاوت ہے۔ محمد زبیر نے کہا کہ تاریخ میں لاک ڈاؤن کی کوئی مثال نہیں، بچوں کے سکول بند ہوں گے، شیخ مجیب نے بھی اسکول بند کرنے کا اعلان نہیں کیا تھا، عمران زبردستی اسلام آباد بند کرنے کا کہہ رہے ہیں۔ محمد زبیر کا کہنا تھا کہ اسلام آباد کو زبردستی بند کرنا بغاوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ کل نعیم الحق نے کہا تھا کہ میٹرو بھی چلنے نہیں دیں گے، اس حد تک جانے کا مقصد یہ ہے کہ ان کو 2018ء میں شکست نظر آ رہی ہے۔محمد زبیر نے مزید کہا کہ عمران چاہتے ہیں لاشیں گریں، جنرل حامد نے جب ان کے چیف منسٹر پر ہاتھ ڈالا تو اسے فارغ کر دیا، جسٹس وجیہ الدین نے پارٹی انتخابات پر شدید ترین الزامات لگائے۔ انہوں نے کہا کہ جسٹس وجیہ الدین نے جہانگیر ترین، پرویز خٹک، عبد العلیم خان پر سنگین الزامات لگائے تو عمران نے جسٹس وجیہ الدین کو ہی فارغ کر دیا۔

محمد زبیر

مزید :

علاقائی -