مسئلہ کشمیر حل ہونے تک جنوبی ایشیا میں امن قائم نہیں ہو سکتا: پاکستان

مسئلہ کشمیر حل ہونے تک جنوبی ایشیا میں امن قائم نہیں ہو سکتا: پاکستان

  

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک )امریکہ میں تعینات پاکستان کے سفیر جلیل عباس جیلانی نے بین الااقوامی دنیا پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کے تصفیہ میں مدد فراہم کرے اور بھارت کو دنیا کی توجہ مقبوضہ کشمیر میں بے گناہ شہریوں پر ظلم و ستم سے ہٹانے نہ دی جائے ۔بالٹی مور میں قائم تھنک ٹینک ورلڈ افیئر ز کونسل سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے سارک کانفرنس میں شرکت سے انکار سمیت دو طرفہ اور بین الاقوامی مذاکرات کی تمام سفارتی کوششوں کو نقصان پہنچانے کے بھارتی عزائم پر گہرے افسوس کا اظہار کیا ۔انہوں نے کہ پاکستان جوہری عدم پھیلاؤکے حوالے سے کردار ادا کررہا ہے جبکہ نیوکلیئرسیکیورٹی اورسیفٹی کے حوالے سے بھی اس کاکردار اہم ہے،عالمی برادری خصوصاً امریکہ کو پاکستان اور بھارت کے درمیان مسئلہ کشمیرکے حل کے لیے اپنا کردار ادا کرے۔انہوں نے مزید کہا کہ جنوبی ایشیا میں امن واستحکام اس وقت تک قائم نہیں ہوسکتا جب تک مسئلہ کشمیر، جوہری اورمیزائل ہتھیاروں کی تیاری میں تحمل اورروایتی ہتھیاروں کے حوالے سے توازن پیدا نہیں کیا جائیگا۔

مزید :

صفحہ آخر -