بجلی اور گیس کی پیداوار بڑھانے کیلئے چھوٹے ڈیم بنائینگے :عنایت اللہ

بجلی اور گیس کی پیداوار بڑھانے کیلئے چھوٹے ڈیم بنائینگے :عنایت اللہ

  

پشاور (سٹاف رپورٹر)صوبہ خیبر پختونخوا کے سینئر وزیر بلدیات و دیہی ترقی عنایت اﷲ نے کہا ہے کہ اجتماع میں لاکھوں کی تعداد میں خصوصاً خواتین ، جوانوں ، علماء اور زندگی کے دیگر شعبوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں کی شرکت اس امر کا منہ بولتا ثبوت ہے کہ جماعت اسلامی صوبے کی مقبول ترین جماعت بن چکی ہے اور جماعت اسلامی کی صوبائی حکومت ، سینٹ، مرکزی اور صوبائی اسمبلی میں مثالی اور جاندار کردار کے نتیجے میں 2018کی آئندہ الیکشن میں صوبے کی سنگل لارجسٹ پارٹی بن جائے گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اضا خیل میں اجتماع عام کے دوسرے دن لاکھوں کی مجمع سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر مرکزی امیر سینٹر سراج الحق ، سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر ، صوبائی امیر مشتاق احمد خان اور بڑی تعداد میں ایم این ایز ، ایم پی ایز اور ناظمین بھی موجود تھے ۔عنایت اﷲ نے کہا کہ اقتدار میں آکر صوبے میں کرپشن ، بے روزگاری ، غربت ، لاقانونیت ، بجلی اور گیس لوڈشیڈنگ کا خاتمہ کریں گے ۔تعلیم اور صحت کو سب کے لئے لازمی اور زراعت ، سیاحت ، معدنیات اور توانائی کے شعبوں پر خصوصی توجہ دیں گے کیونکہ ان شعبوں میں کافی گنجائش موجود ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ صوبے میں بجلی اور گیس کی پیداوار بڑھانے کے لئے بڑے اور چھوٹے ڈیم اور کنویں بنائیں گے اور ان کا پیداوار اتنا زیادہ بڑھائیں گے کہ اسے دوسرے صوبوں اور بیرونی ممالک کو برآمد کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت میں آکر نوجوانوں کے لئے روزگار کے خصوصی مواقع پیدا کریں گے اور اس مقصد کے حصول کے لئے صنعتی شعبہ پر خصوصی توجہ دے کر زیادہ سے زیادہ کارخانے قائم کریں گے ۔ انہو ں نے کہا کہ ہمارے ان اقدامات کے نتیجے میں خیبر پختونخوا جنوب ایشیاء کا سنگار پور بن جائے گا جہاں لوگ دیگر صوبوں اور ممالک سے روزگار اور محنت مزدوری کے لئے آئیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سوات پر خصوصی توجہ دے کر ہر ڈویژن میں ایک خواتین یونیورسٹی اور ہر ضلع میں ایک پوسٹ گریجویٹ کالج قائم کریں گے جبکہ نوجوانوں ، طلباء ، کسانوں اور صنعت کاروں کو بے لا سود قرضے دے کر ان کو روزگار کے مواقع فراہم کریں گے ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -