تحریک انصاف نے دھرنے سے قبل کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے ریلیاں نکالنے کا فیصلہ کر لیا ،دو نومبر کو گرفتاریوں کی صورت میں ”پلان بی“بھی تیار

تحریک انصاف نے دھرنے سے قبل کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے ریلیاں نکالنے کا ...
تحریک انصاف نے دھرنے سے قبل کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے ریلیاں نکالنے کا فیصلہ کر لیا ،دو نومبر کو گرفتاریوں کی صورت میں ”پلان بی“بھی تیار

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان تحریک انصاف نے 2نومبر کو دھرنے سے قبل کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے عمران خان کی زیر قیادت اسلام آباد اور راولپنڈی میں ریلیاں نکالنے کا فیصلہ کر لیا۔تحریک انصاف نے کارکنوں کی گرفتاری کی صورت میں ”پلان بی “بھی جاری کردیا جس کے مطابق اگر کہیں گرفتاریاں ہوئیں تو 200سے زیادہ کارکن فوری طور پر پہنچ کر تھانے کا گھیراﺅ کریں گے ۔

دھرنے سے قبل ”سیاسی کزنز“کی دوریاں ختم کرنے کے لیے رابطے تیز ہو گئے

نجی نیوز چینل ایکسپریس نیوز کے مطابق اتوار کو تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی زیر صدارت بنی گالہ میں اجلاس ہوا جس میں دھرنے کی حکمت عملی پر غوری کیا گیا اور فیصلہ کیا گیا کہ کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے عمران خان پارٹی کے دیگر رہنماﺅں کے ساتھ جڑواں شہروں میں مختلف ریلیوں کی قیادت کریں گے ۔عمران خان اور شیخ رشید 28اکتوبر کو نماز جمعہ کے بعد راولپنڈی شہر اور کینٹ کی بڑی مارکیٹوں کا مشترکہ دورہ کریں گے اور تاجروں کو دھرنے میں شرکت کی دعوت دیں گے جبکہ29اکتوبر کو عمران خان دیگر رہنماوں کے ہمراہ اسلام آباد میں ریلیاں نکالیں گے ۔ذرائع کے مطابق عمران خان نے اپنے رہنماﺅں کو ہدایت کی ہے کہ وہ ٹی وی پروگراموں میں پوری تیاری کے ساتھ جائیں اور ڈان نیوز کی متنازعہ خبر کے معاملے کو زیادہ سے زیادہ اٹھائیں ۔اجلاس میں کارکنوں کی گرفتاری کی صورت میں ”پلان بی“پر بھی غور کیا گیا جس کے تحت گرفتاریوں کی صورت میں دو سو کارکنوں کا گروہ تھانے کا گھیراﺅ کرے گا ۔کارکنوں کو قانونی معاونت دینے کے لیے 24رکنی کمیٹی بھی بنا دی گئی ۔

مزید :

اسلام آباد -