’یہ امریکہ سے ہماری جنگ کا آغاز ہے، اب ہم اسے۔۔۔‘ روسی جرنیل نے انتہائی خطرناک اعلان کردیا، پوری دنیا کو پریشان کردیا

’یہ امریکہ سے ہماری جنگ کا آغاز ہے، اب ہم اسے۔۔۔‘ روسی جرنیل نے انتہائی ...
’یہ امریکہ سے ہماری جنگ کا آغاز ہے، اب ہم اسے۔۔۔‘ روسی جرنیل نے انتہائی خطرناک اعلان کردیا، پوری دنیا کو پریشان کردیا

  

ماسکو (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ اور روس کے تعلقات کی کشیدگی سرد جنگ کے زمانے کے بعد تاریخی عروج کو پہنچ چکی ہے اور ہر گزرتے دن کے ساتھ دونوں کے مابین جنگ کے امکانات روشن ہوتے جا رہے ہیں۔ اب ایک روسی جرنیل نے امریکہ کے ساتھ جنگ کے آغاز کا اعلان کر دیا ہے جس سے دنیا کو مزید پریشانی لاحق ہو گئی ہے۔ برطانوی اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق روسی جرنیل ایوگینے بزکینسکی نے کہا ہے کہ ”اگر ہم سابق سرد جنگ کی بات کریں تو ہم اس وقت ہم دیواربرلن کی تعمیر اور کیوبا کے میزائل بحران جیسی صورتحال سے دوچار ہیں۔یہ امریکہ کے ساتھ ہماری جنگ کا نقطہ آغاز ہے۔ دوسرے لفظوں میں ہم اس وقت امریکہ کے ساتھ جنگ کے دہانے پر موجود ہیں۔“

روس نے کھل کر امریکہ کو للکار دیا، اپنی فوج کو وہ کام کرنے کا حکم دے دیا جو پچھلے 30 برس سے نہ کیا تھا

دوسری طرف روسی وزارت خارجہ نے امریکی صدر باراک اوباما کو دونوں ملکوں کے تعلقات کی تباہی کا ذمہ دار قرار دے دیا ہے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق روسی صدر ولادی میر پیوٹن اس سے قبل ہی امریکی صدارتی انتخابات تک اس سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کا فیصلہ کر چکے ہیں۔ ٹیلیگراف نے اپنی ایک رپورٹ میں بتایا ہے کہ روس اوباما کی بجائے ڈونلڈ ٹرمپ اور ہیلری کلنٹن کے ساتھ اپنے مخلصانہ تعلقات کا آغاز کرنا چاہتا ہے۔ گزشتہ ہفتے ولادی میر پیوٹن نے ایک پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ روس اور امریکہ کے تعلقات اس لیے خراب ہوئے کہ امریکہ مسلسل اپنے فیصلے پوری دنیا پر مسلط کرنے کی کوشش کرتا آ رہا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -