نواز شریف کا علاج کس طرح ہوگا اور کیا پاکستان میں علاج ممکن ہے؟ اہم پیشرفت سامنے آگئی

نواز شریف کا علاج کس طرح ہوگا اور کیا پاکستان میں علاج ممکن ہے؟ اہم پیشرفت ...
نواز شریف کا علاج کس طرح ہوگا اور کیا پاکستان میں علاج ممکن ہے؟ اہم پیشرفت سامنے آگئی

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق وزیر اعظم نواز شریف کے مرض کی تشخیص کے بعد ان کا علاج شروع کردیا گیا ہے۔ ان کا علاج گولیوں اور انجنکشز کے ذریعے ہی ممکن ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ آغا خان ہسپتال کراچی سے آنے والے ڈاکٹر طاہر شمسی نے نواز شریف کی رپورٹس کا جائزہ لینے کے بعد ان کے مرض کی ابتدائی تشخیص کردی ہے۔ انہیں خون کے خلیوں میں ٹوٹ پھوٹ کا مرض لاحق ہے جس کا گولیوں اور انجکشنز کے ذریعے علاج ممکن ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ تھریمبو سائیٹو پینیا کا علاج شروع کرنے سے پہلے پی ای ٹی سکین کرانا ضروری ہے، سروسز ہسپتال میں پیٹ سکین کی سہولت موجود نہیں ہے اس لیے انہیں آج پی کے ایل آئی لے جائے جانے کا امکان ہے۔ پی کے ایل آئی میں نواز شریف کے جگر اور گردوں کے ٹیسٹ ہوں گے جن کی روشنی میں آج میڈیکل بورڈ بیٹھے گا اور علاج کے حوالے سے لائحہ عمل طے کرے گا۔

مزید : قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور