ملتان موٹروے پرمسافروں کیلئے مسجدقائم نہ کرناافسوسناک ہے،لاہور ہائیکورٹ،این ایچ اے کے سینئر افسر کو طلب کرلیا

ملتان موٹروے پرمسافروں کیلئے مسجدقائم نہ کرناافسوسناک ہے،لاہور ...
ملتان موٹروے پرمسافروں کیلئے مسجدقائم نہ کرناافسوسناک ہے،لاہور ہائیکورٹ،این ایچ اے کے سینئر افسر کو طلب کرلیا

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)لاہور ہائیکورٹ نے ملتان موٹروے پربنیادی سہولتوں کی عدم فراہمی کانوٹس لیتے ہوئے این ایچ اے کے سینئر افسر کو طلب کرلیا، عدالت نے تحریری حکم نامے میں کہا ہے کہ ریاست شہریوں کو روٹی،کپڑا،مکان،تعلیم،طبی سہولتیں فراہم کرنے کی پابند ہے، ملتان موٹروے پرمسافروں کیلئے مسجدقائم نہ کرناافسوسناک ہے،مسافروں کودوران سفرسہولتوں کی فراہمی ریاست کی ذمہ داری ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں ملتان موٹروے پرمسافروں کوبنیادی سہولتوں کی فراہمی سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی ، درخواست میں پنجاب حکومت،این ایچ اے اوردیگرکو فریق بنایا گیا ہے،جسٹس جواد حسن نے کہا کہ نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے 3بارجواب جمع کرایالیکن این ایچ اے نے سہولتوں کی فراہمی سے متعلق نہیں بتایا،عدالت نے تحریری حکم نامہ جاری کرتے ہوئے کہا کہ نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے جواب غیرتسلی بخش ہیں،آرٹیکل 26عوامی مقامات پربنیادی سہولتوں کی فراہمی کی ضمانت دیتاہے،تحریری حکم نامے میں کہا گیاہے کہ ریاست شہریوں کو روٹی،کپڑا،مکان،تعلیم،طبی سہولتیں فراہم کرنے کی پابندہے،ملتان موٹروے پرمسافروں کیلئے مسجدقائم نہ کرناافسوسناک ہے،مسافروں کودوران سفرسہولتوں کی فراہمی ریاست کی ذمہ داری ہے۔عدالت نے ملتان موٹروے پربنیادی سہولتوں کی عدم فراہمی کانوٹس لیتے ہوئے این ایچ اے کے سینئرافسرکوطلب کرلیا ۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور