” کیپٹن صفدر کی جس طرح گرفتاری ہوئی اس کی ضرورت نہیں تھی “

” کیپٹن صفدر کی جس طرح گرفتاری ہوئی اس کی ضرورت نہیں تھی “
” کیپٹن صفدر کی جس طرح گرفتاری ہوئی اس کی ضرورت نہیں تھی “

  

حیدرآباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) وفاقی وزیراسد عمر کا کہنا ہے کہ کیپٹن صفدر کی جس طرح گرفتاری ہوئی اس کی ضرورت نہیں تھی، وہ کوئی اتنے بڑے سیاسی ٹارزن تو نہیں ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر ترقی و منصوبہ بندی اسد عمر ایک روزہ دورے پر حیدرآباد پہنچ گئے ہیں، مقامی رہنماو¿ں سے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ کراچی پیکیج میں پانچ بڑے منصوبوں کی ذمہ داری وفاق نے لی ہے، کے فور پر دوبارہ کام شروع ہوگا اور یہ منصوبہ اب واپڈا مکمل کرے گا، کراچی میں گرین لائین منصوبے کے لیے بسوں کا آرڈر کردیا ہے، جب کہ شہر میں نالوں کی صفائی سے قبل لوگوں کی منتقلی ضروری ہے جو سندھ حکومت نے کرنی ہے۔

اسد عمر کا کہنا تھا کہ کراچی واقعے پر بلاجواز احتجاج کیا جارہا ہے، جب وزیر اعلی اور آئی جی نے خود نہیں کہا کہ وہ اغوا ہوئے تو پھر احتجاج کس چیز کا کیا جارہا ہے، کیپٹن صفدر کے خلاف کاروائی قانون کے مطابق کی گئی، بابائے قوم کی قبر کی بے حرمتی کی گئی اور وہاں چھلانگیں لگائی گئیں، کیپٹن صفدر کی جس طرح گرفتاری ہوئی اس کی ضرورت نہیں تھی، وہ کوئی اتنے بڑے سیاسی ٹارزن تو نہیں ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ پی ڈی ایم کے کراچی جلسے کو عوام نے مسترد کردیا، کراچی میں جو جلسہ ہوا اس میں وہاں کے شہری نہیں تھے، جلسوں سے گھبرانے کی کوئی بات نہیں، اگر کورونا وبا نہ ہوتی تو ایم کیو ایم کے ساتھ مل کر کراچی میں ایک بڑا عوامی جلسہ منعقد کرکے دکھاتے۔

مزید :

قومی -