گھر کی دہلیز پر دادرسی کیلئے ہفتہ میں ایک دن کھلی کچہریاں لگائیں، سی سی پی او

گھر کی دہلیز پر دادرسی کیلئے ہفتہ میں ایک دن کھلی کچہریاں لگائیں، سی سی پی او

  

 لا ہو ر (کر ائم رپو رٹر)سی سی پی او لاہور ایڈیشنل آئی جی غلام محمود ڈوگر کی زیر صدارت انسداد جرائم بارے جائزہ اجلاس کیپٹل سٹی پولیس ہیڈ کوارٹرز میں منعقد ہوا ڈی آئی جی آپریشنز افضال احمد کوثر،ڈی آئی جی انوسٹی گیشن اطہر اسماعیل،ایس ایس پی انویسٹی،ایس ایس پی لیگل، آپریشنز انوسٹی گیشن سمیت تمام یونٹس کے تمام ایس پیز، اے ایس پیز اورمتعلقہ افسران نے اجلاس میں شرکت کی غلام محمود ڈوگر نے کرائم کنٹرول اور امن و امان کی مجموعی صورتحال اور قتل،اقدام قتل، چوری،ڈکیتی، اغوا اور راہزنی کے زیر تفتیش مقدمات میں پیش رفت کا بھی جائزہ لیا غلام محمود ڈوگر نے سینئر پولیس افسران کو انسدادی کاروائیاں اور تفتیش کے معاملات بہتر بنانے پر زور دیا لاہور پولیس کے تمام تھانوں او پولیس دفاتر میں بائیو میٹرک حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کی۔انہوں نے کہا کہ ڈی آئی جیز اور ایس ایس پیز سمیت تمام سینئر افسران فیلڈ اور پبلک میں جائیں اورشہریوں کے گھر کی دہلیز پر مسائل کی دادرسی کیلئے ہفتہ میں ایک دن کھلی کچہریاں لگائیں کھلی کچہری میں آپریشنز انوسٹی گیشن، ڈولفن سکواڈ، سی آئی اے اور اے وی ایل ایس کے نمائندہ افسران کو لازمی موجود رہنے کی ہدایت کی۔غلام محمود ڈوگر نے کہا کہ پبلک مقامات، تعلیمی اداروں اور اطراف میں منشیات فروشی کے خلاف موثر کریک ڈاؤن کریں۔ بدمعاشوں، اشتہاری مجرموں،قبضہ گروپوں، ٹھیکیدار بھکاری مافیا کے خلاف کریک ڈاؤن میں تیزی لائیں۔

سی سی پی او لاہور نے کہا کہ ڈالہ کلچر،اسلحہ کی نمائش، ہوائی فائرنگ سے شہریوں کو ہراساں کرنے والوں کی بلا امتیاز فوری گرفتاری یقینی بنائیں۔سربراہ لاہور پولیس نے ہدایت کی کہ کوئی پرچہ زیر التوا نہ ہو،ایف آئی آر کے اندراج میں تاخیر پر سخت ایکشن لوں گا۔سی سی پی او لاہور نے کمپلینٹ مینجمنٹ سیل کے زیر التوا کیسز جلد از جلد نمٹانے کی ہدایت کی۔انہوں نے کہا کہ کرائم کنٹرول، اشتہاری مجرموں کی گرفتاری  اور کمیونٹی پولیسنگ کے تحت شہریوں کو بہتر خدمات کی فراہمی کے لئے موثر سٹرٹیجی تشکیل دیں۔انصاف کی فراہمی یقینی بنانے کے لئے میرٹ پر تفتیش سے کیسز جلد یکسو کریں اور سائلین کو تھانوں کے  بلا ضرورت چکر نہ لگوائیں۔غلام محمود ڈوگر نے کہا کہ موٹر سائیکل،گاڑی چوری اور چھینے کی وارداتوں میں خاطر خواہ کمی آئی ہے تاہم مجرموں کو کیفرِ کردار تک پہنچانے کے لیے چالاننگ کی شرح بہتر بنانے کی اشد ضرورت ہے۔سی سی پی او لاہور نے جرائم پیشہ افراد کی سرکوبی کے لیے پنجاب فرانزک سائنس لیب اور سیف سٹیز اتھارٹی سے کوآرڈینیشن مزید بہتر بنانے کی ضرورت پر زور دیا۔غلام محمود ڈوگرنے لوکل اینڈ سپیشل لاش کے تحت پتنگ بازی،ون ویلنگ،ہوائی فائرنگ، لاؤڈ سپیکر و کرایہ داری ایکٹ  کے تحت قانونی کاروائیوں میں تیزی لانے کی ہدایت کی۔

مزید :

علاقائی -