پاکستان بحرین سرنایہ کاری فورم کل شروع ہوگا ، 7معاہدوں پر دستخط متوقع

پاکستان بحرین سرنایہ کاری فورم کل شروع ہوگا ، 7معاہدوں پر دستخط متوقع

 اسلام آباد(اے پی پی) پاک بحرین سرمایہ کاری فورم پہلی مرتبہ اتوار سے بحرین میں شروع ہوگا۔فورم کی افتتاحی تقریب میں 350 سے زائد مندوبین شرکت کریں گے جن میں دونوں ممالک کے سرکاری حکام ‘ سرمایہ کار اور تاجربرادری شامل ہوگی۔25 ستمبر سے شروع ہونے والے فورم سے دونوں ممالک کے سرمایہ کاروں اور کاروباری افراد کو دو طرفہ سرمایہ کاری ‘ تجارت اور اقتصادی تعلقات میں اضافہ کے حوالے سے آگاہی فراہم کی جائے گی۔ فورم کے موقع پر پاکستان اور بحرین کے درمیان سات مختلف معاہدوں پر دستخط بھی متوقع ہیں۔بحرین میں پاکستان کے سفیر جاوید ملک نے کہا ہے کہ پاکستان اور بحرین تجارت ‘ سرمایہ کاری ‘ دفاع ‘ تعلیم ‘ صحت ‘ محنت و افرادی قوت ‘ توانائی اور فنی و پیشہ وارانہ تربیت کے شعبوں میں تعاون کے فروغ کے خواہش مند ہیں۔انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان پہلی مرتبہ ایک اعلیٰ سطح کا ایک سرمایہ کاری فورم منعقد کیا جارہا ہے جس سے دونوں برادر ممالک کے وسیع اور گہرے تعلقات کی عکاسی ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ فورم میں بحرین کی کاروباری ‘ سرمایہ کار اور تاجر برادری کے علاوہ متحدہ عرب امارات ‘ کویت ‘ سعودی عرب اور دیگر خلیجی ممالک کے سرمایہ کار بھی شرکت کریں گے۔جاوید ملک نے کہا کہ پاکستان میں بینکاری ‘ فنانس‘ ریئل اسٹیٹ ‘ انرجی ‘ ٹرانسپورٹ اور بجلی کے پیداواری شعبوں سمیت دیگر مختلف شعبوں میں بھی سرمایہ کاری کے وسیع امکانات موجود ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ بحرین میں موجود پاکستانی سرمایہ کاروں کے لئے زرعی شعبہ اور غذائی مصنوعات کی درآمد اور برآمد کے ساتھ ساتھ پھلوں اور سبزیوں کے شعبوں میں بھی سرمایہ کاری کے وسیع امکانات موجود ہیں۔انہوں نے کہا کہ بحرین کے شہنشاہ حماد بن عیسیٰ الخلیفہ کے2014ء کے دورہ پاکستان کے موقع پر پاکستان اور بحرین کے دو طرفہ تعلقات میں مزید اضافہ ہوا۔ اسی طرح 2015ء میں وزیراعظم محمد نوازشریف نے بحرین کا دورہ کیا جس سے دونوں ممالک کے باہمی تعلقات میں مدد حاصل ہوئی ہے۔

مزید : کامرس


loading...