رواں برس پنجاب پولیو سے پاک ، کوئی کیس سامنے نہیںآ یا، ڈاکٹر منیر احمد

رواں برس پنجاب پولیو سے پاک ، کوئی کیس سامنے نہیںآ یا، ڈاکٹر منیر احمد

لاہور (جنرل رپورٹر) خناق کی روک تھام کیلئے چار برس عمر تک کے بچوں کو ویکسین کی بوسٹر ڈوز دینے کا فیصلہ کر لیا گیا۔یہ بات حفاظتی ٹیکوں کے پروگرام کی کارکردگی سے متعلق ڈی جی ہیلتھ آفس میں ڈائریکٹر ای پی آ ئی ڈاکٹر منیر احمد نے میڈیا کو بریفنگ میں بتائی۔ ڈاکٹر منیر احمد نے بتایا کہ پولیو کے خلاف موثر انداز میں مہم چلانے سے رواں برس پنجاب پولیو سے پاک ہے اور کوئی کیس سامنے نہیںآ یا۔ ڈائریکٹر ای پی آ ئی نے کہا کہ خناق کے رواں برس صوبے میں ایک سو چار کیسز سامنے آ ئے ہیں اور بارہ اموات ہوئی ہیں جن میں سے23 کیس لاہور میں سامنے آئے اور تین اموات ہوئی ہیں۔ ڈاکٹر منیر نے کہا کہ خناق کا مرض چار سے دس برس عمر تک کے بچوں میں زیادہ دیکھنے میں آ رہا ہے جس پر ماہرین کی ایڈوائس پر چار برس عمر کے بچوں کو خناق سے بچاو کیلئے ویکسین کی بوسٹر ڈوز دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ڈاکٹر منیر نے بتایا کہ خسرہ کے ایک سو بہتر کیسز اور ربیلا کے چار سو گیارہ کیسز سامنے آ ئے ہیں تاہم اس حوالے سے صورتحال مجموعی طور پر تسلی بخش ہے۔ ڈاکٹر منیر نے کہا کہ روٹا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین کو نومبر سے ای پی آ ئی کا حصہ بنایا جارہا ہے۔ ڈاکٹر منیر احمد نے کہا کہ ویکسینیٹرز کی کمی دور کرنے کیلئے مرحلہ وار نئی بھرتیاں بھی کی جارہی ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...