قبضہ گروپوں، بدعنوانوں کیخلاف آپریشن، 496کنال زمین واگزار 

قبضہ گروپوں، بدعنوانوں کیخلاف آپریشن، 496کنال زمین واگزار 

  

لاہور(سپیشل رپورٹر،اپنے نمائندے سے) اینٹی کرپشن کی قبضہ مافیا کے خلاف ایک اور بڑی کارروائی، کروڑوں روپے مالیت کی زمین واگزار کر لی۔ اینٹی کرپشن پاکپتن نے قبضہ گروپ سے 15 کروڑ 50 لاکھ مالیتی 496 کنال زرعی اراضی واگزار کرالی اور زمین فیڈرل لینڈ کمیشن کے حوالے کر دی۔ ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن ساہیوال اشفاق رحمان کی نگرانی میں ڈپٹی ڈائریکٹر رانا فواد احمد نے پولیس اور محکمہ مال کے ساتھ پاکپتن کے علاقے ڈھکو چشتی میں کارروائی کی۔ قبضہ گروپ سالہا سال سے سرکاری زمین پر قابض تھا۔ ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب نے تمام ریجنل ڈائریکٹرز کو قبضہ گروپوں و لینڈ مافیا کے خلاف گھیرا تنگ کرنے کی ہدایات کر دیں،دریں اثناء اینٹی کرپشن نے اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ سمیت 4 سروس سینٹر اہلکاروں کو گرفتار کر لیا، سابقہ اے ڈی ایل آر ٹیکسلا اور موجودہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ فتح جنگ اللہ دتہ کو سٹاف سمیت گرفتار کیا گیا،ملزمان نے 7 کنال 12 مرلہ زمین جعل سازی سے مار گلہ ہل سوسائٹی کو بیچ دی،لینڈ ریکارڈ سینٹر ٹیکسلا کے افسر اور عملہ نے ملکر اصلی مالک کو زمین سے محروم کیا،ملزموں نے مار گلہ ہلز سوسائٹی سے اس جعل سازی کے لاکھوں بٹورے،ڈپٹی ڈائریکٹر اینٹی کرپشن اٹک اور سرکل آفیسر ذوالفقار بازید نے کامیاب کارروائی کرکے ملزمان کو گرفتار کیا۔ ڈی جی گوہر نفیس کا کہنا ہے کہ لینڈ ریکارڈ سینٹر بدعنوانی اور رشوت ستانی کا گڑھ بنتے جا رہے ہیں 

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -