میگا منی لانڈرنگ کیس،زرداری کی درخواست مسترد،فرد جرم عائد کرنیکا حکم،ضمانت میں 15اکتوبر تک توسیع

  میگا منی لانڈرنگ کیس،زرداری کی درخواست مسترد،فرد جرم عائد کرنیکا ...

  

 اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) احتساب عدالت نے 3 کرپشن ریفرنسز میں آصف زرداری کو بری کرنے کی درخواستیں خارج کرتے ہوئے فرد جرم عائد کرنے کا حکم دیدیا۔پارک لین، میگا منی لانڈرنگ اور ہریش اینڈ کمپنی ریفرنسز میں عدالت نے سابق صدر آصف زرداری کی ریفرنسز خارج کر کے بری کرنے کی درخواستیں مسترد کر دیں۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ آصف علی زرداری کو جعلی اکاونٹس ریفرنسز میں بری نہیں کیا جاسکتا۔آصف زرداری نے تینوں ریفرنسز میں بری کرنے کی درخواست دائر کی تھی جس پر عدالت نے فیصلہ سناتے ہوئے تمام ملزمان کو 28 ستمبر کو طلب کر لیا۔ یاد رہے میگا منی لانڈرنگ اور پارک لین ریفرنسز میں آصف زرداری سمیت شریک ملزمان کے خلاف فرد جرم 9 ستمبر کو مؤخر کی گئی تھی۔ علاوہ ازیں اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق صدر کی8ارب کی مشکوک ٹرانزیکشن کیس میں عبوری ضمانت میں 15اکتوبر تک توسیع کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔ بدھ کو اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نے سابق صدر آصف زرداری کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔آصف زرداری کے وکیل فاروق نائیک عدالت میں پیش ہوئے۔ دورانِ سماعت نیب نے بتایا کہ آصف زرداری کے وارنٹ گرفتاری پراسس میں ہیں، اس پر عدالت نے کہا کہ نیب اس کیس میں فریش کمنٹس فائل کرنا چاہے تو کرسکتا ہے۔ بعد ازاں عدالت نے سابق صدر کی عبوری ضمانت میں 15اکتوبر تک توسیع کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

فردجرم حکم

مزید :

صفحہ اول -