بلاول، شہباز اور فضل الرحمان تک سب فوج سے رابطے میں ہیں، شیخ رشید

  بلاول، شہباز اور فضل الرحمان تک سب فوج سے رابطے میں ہیں، شیخ رشید

  

 راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اورڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید کے سامنے پارلیمانی لیڈر کھل کر بات کرتے ہیں۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشیدنے کہا کہ اپوزیشن کے سب لوگ رابطوں میں ہیں، بلاول سے فضل الرحمان تک سب رابطے میں ہیں، اگر میں غلط کہہ رہا ہوں تو یہ لوگ کہیں کہ رابطے میں نہیں ہیں؟۔ آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی کے سامنے پارلیمانی لیڈر کھل کر بات کرتے ہیں، وہاں وزیراعظم بیٹھے ہوں تو شاید کوئی نیا ایشو کھڑا ہوجائے، وزیراعظم کے سامنے اپوزیشن کھل کربات نہیں کرسکتی۔ اپوزیشن سے رابطے رکھنا اْن کا کام ہے، بعض ملاقاتوں کا ایک ہی دن طے ہوتا ہے، آگے ’اے‘ مل رہا ہے تو پیچھے ’بی‘ مل رہا ہے اور سی میں آدھے گھنٹے کا فرق پڑ گیا۔ سی کو ویٹنگ روم میں بٹھایا ہوا ہے لیکن سی کو علم ہے ’اے‘ اور ’بی‘ کون ہیں، ڈی کو بھی پتہ ہے ’اے‘، ’بی’اور ’سی‘ کون ہیں، ایسے ہی سارے لوگوں نے ادھم مچا رکھا ہے۔خیال رہے کہ وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید نے دعویٰ کیا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کی عسکری قیادت سے دو ماہ میں دو ملاقاتیں ہوئی ہیں۔ احسن اقبال عسکری قیادت کے ساتھ دونوں ملاقاتوں میں موجود تھے۔انہوں نے کہا کہ پہلی ملاقات 5 گھنٹے اور دوسری ملاقات سوا 3 گھنٹے تک ہوئی۔ پہلی ملاقات میں شہبازشریف اور میں نے ایک ٹیبل پرکھانا کھایا۔شیخ رشید نے دعویٰ کیا کہ خواجہ آصف اور احسن اقبال نے آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید سے ون آن ون ملاقات بھی کی۔تاہم اب ڈی جی آئی ایس پی آر نے بتایا ہے کہ آرمی چیف سے محمد زبیر نے 7 ستمبر کو بھی ملاقات کی اور دونوں ملاقاتیں محمد زبیر کی درخواست پر ہوئیں، ملاقات میں نواز شریف اور مریم نواز سے متعلق باتیں ہوئیں۔

شیخ رشید

مزید :

صفحہ اول -