حکومت کی جی ایم لیگل برطرفی کا نوٹیفکیشن واپس لینے کی رپورٹ ہائیکورٹ میں پیش 

حکومت کی جی ایم لیگل برطرفی کا نوٹیفکیشن واپس لینے کی رپورٹ ہائیکورٹ میں ...

  

لاہور(نامہ نگار)جی ایم لیگل سوئی گیس عادل نثار کی برطرفی کیخلاف دائر درخواست پروفاقی حکومت نے برطرفی کا نوٹیفکیشن واپس لینے کی رپورٹ لاہورہائی کورٹ میں پیش کردی  عدالت نے آئندہ سماعت پر فریقین کے وکلا کو بحث کے لئے طلب کرلیا ہے،جسٹس عائشہ اے ملک نے جی ایم لیگل سوئی گیس عادل نثار کی درخواست پر سماعت کی،کیس کی سماعت شروع ہوئی تو ڈپٹی اٹارنی جنرل نے عدالت کوبتایا کہ درخواست گزار کی برطرفی کا نوٹیفکیشن واپس لے لیا گیاہے،درخواست گزار کا موقف ہے کہ محکمہ سوئی گیس خودمختار ادارہ ہے،درخواست گزار کو تمام قانونی تقاضے پورے کرنے کے بعد جی ایم لیگل سیریز کا انعقاد کیا گیا،وفاقی حکومت کے پاس کوئی اختیار نہیں کہ سوئی گیس کے کسی افسر یا اہلکار کو برطرف کرنے کی ہدایت دے، وفاقی حکومت کی ہدایت پر درخواست گزار کو 7 اپریل 2020 کو ملازمت سے برطرف کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا،برطرفی کے نوٹیفکیشن کو ہائی کورٹ میں چیلنج کیا جس پر عدالت نے حکم امتناعی جاری کردیا۔

درخواست گزار کی برطرفی کے نوٹیفکیشن کوکالعدم قرار یاجائے۔

مزید :

علاقائی -