شیخوپورہ،ٹھیکیدار سیوریج کا کام ادھورا چھور کر غائب،مقامی افراد پریشان

شیخوپورہ،ٹھیکیدار سیوریج کا کام ادھورا چھور کر غائب،مقامی افراد پریشان

  

 شیخوپورہ (بیورورپورٹ)شہر کی گنجان آبادی طارق روڈ کی ملحقہ گلیوں میں ٹھیکیدارسیوریج کا کام ادھورا چھوڑ کر غائب،، مٹی کے ڈھیر اور اینٹیں مقامی لوگوں اور راہگیروں کیلئے عذاب بن چکی ہیں۔ میونسپل کارپوریشن کے افسران کو بارہا تحریری شکایات کے باوجود ان کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگی اور الٹا شکایت کرنے والے شہریوں کوہراساں کرنے لگے ہیں جس پر طارق روڈ کے باسی سراپا احتجاج بن گئے اور انہوں نے ایڈمنسٹریٹر میونسپل کارپوریشن چوہدری اصغر علی جوئیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ طارق روڈ کی گلیوں میں تعمیراتی مکمل کرواکر شہریوں کو اس اذیت سے نجات دلائیں، اس موقع پر رائے عاطف، رانا عبدالستار، رائے ثاقب، ندیم جان، سید راشد شاہ نے بتایا کہ طارق روڈ اور اسکی ملحقہ گلیوں میں گزشتہ دو سال سے سیوریج کے مسائل شدت اختیار کرچکے ہیں۔ ملحقہ گلیوں میں سیوریج کا گندہ پانی کھڑا رہتا ہے جبکہ صفائی ستھرائی کی صورتحال اس قدر بگڑ چکی ہے کہ کئی کئی دن سینٹری ورکرز نہ تو گلیوں کی صفائی کرتے ہیں نہ ہی کوڑا کرکٹ اٹھانے کیلئے آتے ہیں جس کے باعث ان گلیوں میں جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر پڑے ہیں اور کینال کالونی کے قریب سڑک کے اوپر فلتھ ڈپو بنادیا گیا جہاں پر کوڑا منوں کے حساب سے کئی کئی دن پڑا رہتا ہے۔ شہری تعفن اور بدبو کی وجہ سے سخت پریشان رہتے ہیں۔ متاثرہ شہریوں نے کہا کہ وہ اس صورتحال سے میونسپل کارپوریشن کے حکام کو بار بار آگاہ کرچکے ہیں مگر انکی داد رسی نہیں کی جارہی، رابطہ کرنے پر چیف آفیسر چوہدری احسن عنایت سندھو نے انچارج صفائی ستھرائی رستم علی کو ہدایت کی کہ وہ فوری طور پر مذکورہ علاقہ میں صفائی ستھرائی کی صورتحال بہتر بنانے کیلئے اقدامات اٹھائیں مگر اس ہدایت کے باوجود علاقہ میں صفائی ستھرائی کا عمل شروع نہیں ہوسکا۔ 

سیوریج  مسائل

مزید :

صفحہ آخر -