توشہ خانہ ریفرنس ،آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور،2 گواہوں کے بیانات قلمبند

توشہ خانہ ریفرنس ،آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور،2 گواہوں ...
توشہ خانہ ریفرنس ،آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور،2 گواہوں کے بیانات قلمبند

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)احتساب عدالت نے توشہ خانہ ریفرنس میں سابق صدر آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرلی ، نیب کے دو گواہوں کے بیانات قلمبند کرلئے گئے ۔

احتساب عدالت میں آصف زرداری، نوازشریف، یوسف رضا گیلانی کیخلاف توشہ خانہ ریفرنس کی سماعت ہوئی،سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی عدالت میں پیش ہو گئے، احتساب عدالت کے جج اصغر علی کیس کی سماعت کررہے ہیں، آصف زرداری اورانور مجیدنے حاضری سے استثنیٰ کی درخواست دائر کردی۔

فاروق ایچ نائیک نے کہاکہ غیر ضروری تاخیر کرنے کی ضرورت نہیں، گواہان کے بارے میں کہا تھا کہ ہم لسٹ دیں گے،گواہان کا بیان ریکارڈ کروا لیں جرح آئندہ سماعت پر کریں گے،نیب ڈپٹی پراسیکیوٹرسردار مظفر عباسی نے کہاکہ گواہ کا بیان ریکارڈ کریں اور جرح کریں تاکہ ہم اگلا گواہ پیش کریں، ہم اپنے گواہوں کو کیوں شو کریں، کل کو یہ کہیں گے کہ تمام گواہان کا بیان ریکارڈ کروا لیں جرح بعد میں کر لیں گے،کیس کو ڈے ٹو ڈے چلایا جائے۔

فاروق ایچ نائیک نے کہاکہ ڈھائی سال سے تفتیش مکمل نہیں کی گئی اب ان کو کیوں جلدی ہو رہی ہے؟،جج سید اصغر علی نے کہاکہ کسی کے کہنے پر تو کیس ڈے ٹو ڈے نہیں چلایا جائے گا، نیب کے پہلے گواہ عمران اشرف نے بیان قلمبند کرانا شروع کردیا،احتسا ب عدالت میں بیان قلمبند کرنے سے قبل گواہ سے حلف لیا گیا۔

گواہ نے بیان ریکارڈ کرتے ہوئے کہاکہ 7فروری 2019کو نیب کی جانب سے لیٹر موصول ہوا،نیب کی جانب سے انکوائری کےلئے تفصیلات مانگی گئیں، گواہ نے کہاکہ آصف زرداری کی 2008 کے کاغذات نامزدگی اور اثاثہ جات کی تفصیلات مانگی گئیں،چیف الیکشن کمیشن کی جانب سے مجھے منتخب کیے گیا تھا،۔

گواہ نے کہاکہ فروری 2019کو توشہ خانہ انکوائری کےلئے تفتیشی افسر کے سامنے پیش ہوا،آصف زرداری کے اصلی دستاویزات کی کاپیاں تفتیشی افسر کو فراہم کی،وائٹ سیزر میمو تیار کیا گیا تھا۔

وکیل صفائی نے کہاکہ گواہ کو نیب بے شک تیار کرواکے آئیں لیکن عدالت میں بولنے دیں،نیب پراسیکیوٹر کی جانب سے بولنے نہیں دیا جا رہا۔

 گواہ عمران ظفر نے آصف زرداری سے متعلق اصل دستاویز عدالت میں پیش کردی،نیب کے پہلے گواہ عمران ظفر کا بیان قلمبندکرلیاگیاعدالت نے بیان قلم بند کرنے کیلئے نیب کے دوسرے گواہ کو طلب کرلیا،ملزموں کے وکلا نے دستاویز فراہم کرنے والے دیگر گواہوں کا بیان ریکارڈ کرنے کی استدعاکردی۔

ڈپٹی پراسیکیوٹرجنرل نیب نے کہاکہ آپ نے نہیں ہم نے فیصلہ کرنا ہے،ملزموں کے وکلا عدالتی کاررروائی کو بلڈوز کرنا چاہتے ہیں ، فاروق ایچ نائیک نے کہاکہ بلڈوز کا مطلب طاقت کااستعمال ہوتا ہے۔

احتساب عدالت اسلام آباد نے آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرتے ہوئے توشہ خانہ ریفرنس کی سماعت یکم اکتوبر تک ملتوی کردی۔

جج احتساب عدالت نے یوسف رضا گیلانی کی حاضری معافی کی درخواست پر کہاکہ فی الحال اس درخواست پر فیصلہ نہیں کر سکتے، یوسف رضا گیلانی آئندہ سماعت پر نہیں آ سکتے تو انکا وکیل آ جائے،مستقل استثنیٰ دیدیا جائے تو ملزم کے وکیل بھی غائب ہو جاتے ہیں۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -