دھونی ایک مرتبہ پھر سست بیٹنگ کے باعث تنقید کی زد میں، اس مرتبہ میچ کس کیخلاف تھا اور نتیجہ کیا نکلا؟ حیران کن خبر آ گئی

دھونی ایک مرتبہ پھر سست بیٹنگ کے باعث تنقید کی زد میں، اس مرتبہ میچ کس کیخلاف ...
دھونی ایک مرتبہ پھر سست بیٹنگ کے باعث تنقید کی زد میں، اس مرتبہ میچ کس کیخلاف تھا اور نتیجہ کیا نکلا؟ حیران کن خبر آ گئی
سورس: Twitter/@msdhoni

  

دبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان مہندرا سنگھ دھونی ایک مرتبہ پھر میچ کے دوران سست بیٹنگ کرنے کے باعث تنقید کی زد میں آ گئے ہیں۔ 

تفصیلات کے مطابق انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) میں راجستھان رائلز کیخلاف میچ میں کافی دیر تک سست بیٹنگ پر چنئی سپرکنگز کے کپتان مہندرا سنگھ دھونی تنقید کی زد میں ہیں۔ مہندرا سنگھ دھونی 14 ویں اوور میں بیٹنگ کیلئے آئے اور اپنی ابتدائی 13 بالز پرمحض10 رنز بنائے جبکہ ان کے ساتھی کھلاڑی فاف ڈو پلیسی نے دھواں دار بیٹنگ کرتے ہوئے 7 چھکوں سے مزین 72 رنز کی اننگز کھیلی۔ 

مہندرا سنگھ دھونی نے آخری اوور میں تین چھکے جڑے مگر تب تک کھیل ہاتھ سے نکل چکا تھا جس پر انہیں خاصی تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ بھارتی ٹیم کے سابق اوپنر گوتم گمبھیر نے کہا کہ آپ اسے ’لیڈ فرام فرنٹ‘ قرار نہیں دے سکتے، اگر آپ آخری اوور کی بات کرتے ہیں تو اس کا کوئی فائدہ نہیں تھا، وہ صرف ذاتی رنز تھے۔

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ مہندرا سنگھ دھونی انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) ورلڈکپ 2019ءمیں انگلینڈ کیخلاف کھیلے گئے میچ میں بھی سست بیٹنگ کی وجہ سے تنقید کا نشانہ بنے تھے، اس میچ میں انگلینڈ کی شکست پاکستان کی سیمی فائنل میں رسائی کی راہ ہموار کر دیتی تاہم بھارت یہ میچ ہار گیا اور دھونی نے آخری اوورز میں خاص طور پر بہت سست بیٹنگ دکھائی جس پر کافی شکوک و شبہات کا اظہار کیا گیا تھا اور بعد ازاں کئی سابق کرکٹرز اور ماہرین بھی اس میچ کو مشکوک قرار دیتے رہے ہیں۔ 

مزید :

کھیل -