قائمہ کمیٹی نے پی سی بی حکام کے الاﺅنسز، تنخواہوں اور مراعات کی تفصیلات طلب کر لیں، اجلاس کب ہو گا اور پی سی بی کی طرف سے کون کون پیش ہو گا؟ تفصیلات سامنے آ گئیں

قائمہ کمیٹی نے پی سی بی حکام کے الاﺅنسز، تنخواہوں اور مراعات کی تفصیلات طلب ...
قائمہ کمیٹی نے پی سی بی حکام کے الاﺅنسز، تنخواہوں اور مراعات کی تفصیلات طلب کر لیں، اجلاس کب ہو گا اور پی سی بی کی طرف سے کون کون پیش ہو گا؟ تفصیلات سامنے آ گئیں

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے بین الصوبائی رابطہ امور نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) حکام کے الاﺅنسز، تنخواہوں اور مراعات کی تفصیلات بھی طلب کر لی گئی ہیں جبکہ حکام جمعرات کو قائمہ کمیٹی کے سامنے پیش ہوں گے۔ 

تفصیلات کے مطابق بین الصوبائی رابطہ امور پر قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی کا اجلاس جمعرات کو پارلیمنٹ ہاﺅس اسلام آباد کے کمیٹی روم میں چیئرمین آغا حسن بلوچ کی زیرصدارت ہو گا جس دوران ممبر قومی اسمبلی ڈاکٹر مہرین رزاق بھٹو کے سوالات پر بات چیت کی جائے گی، گزشتہ تین برس میں پی سی بی کی سالانہ آمدنی اور اخراجات کی تفصیلات زیرغور آئیں گی، چیئرمین و دیگر حکام کے الاﺅنسز، تنخواہوں اور مراعات پر بات ہو گی، رکن قومی اسمبلی چوہدری فقیر احمد کے بوریوالہ میں کرکٹ سٹیڈیم کی تعمیر کے سوال پر بورڈ حکام سے تفصیلات بھی پوچھی جائیں گی۔

نجی خبر رساں ادارے ایکسپریس نیوز کے مطابق اس حوالے سے رابطہ کرنے پر پی سی بی کے ڈائریکٹر میڈیا سمیع الحسن برنی نے کہا کہ قائمہ کمیٹی کی میٹنگ 30 اگست کو ہونا تھی جو11 ستمبر کو ری شیڈول ہوئی اور اب جمعرات کو انعقاد ہو رہا ہے، اجلاس میں پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر (سی ای او) وسیم خان، چیف فنانشل آفیسر جاوید مرتضیٰ اور سینئر جنرل منیجر ایڈمن شریک ہوں گے۔

دریں اثنا پبلک اکاﺅنٹس کمیٹی کی میٹنگ30 ستمبر کو پارلیمنٹ ہاﺅس کے کمیٹی روم میں شیڈول ہے جس میں پی سی بی کی سپیشل آڈٹ رپورٹ اور پی ایس ایل ون اور ٹو کی آڈٹ رپورٹس پر تبادلہ خیال کیا جائے گا، رانا تنویر حسنین اجلاس کی صدارت کریں گے۔ اس حوالے سے استفسار پر کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر میڈیا سمیع الحسن برنی نے کہا کہ پبلک اکاونٹس کمیٹی کی میٹنگ میں ممکنہ طور پر چیئرمین پی سی بی احسان مانی، سی ای او وسیم خان، سی او او سلمان نصیر اور سی ایف او جاوید مرتضیٰ شریک ہوں گے۔

مزید :

کھیل -