خاتون کو کئی مرتبہ جنسی زیادتی کا نشانہ بنا کر حاملہ کرنے والے مرد کی اس سے شادی کے بعد ضمانت منظور کرلی گئی

خاتون کو کئی مرتبہ جنسی زیادتی کا نشانہ بنا کر حاملہ کرنے والے مرد کی اس سے ...
خاتون کو کئی مرتبہ جنسی زیادتی کا نشانہ بنا کر حاملہ کرنے والے مرد کی اس سے شادی کے بعد ضمانت منظور کرلی گئی
کیپشن:    سورس:   creative commons license

  

راولپنڈی(مانیٹرنگ ڈیسک) روالپنڈی میں خاتون کو کئی ماہ تک جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے اور اسے حاملہ کرنے والے مرد کی ضمانت منظور کر لی گئی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق ملزم کا نام طارق بتایا گیا ہے جو کئی ماہ تک مہوش نامی خاتون کو جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا رہا جس کے نتیجے میں وہ حاملہ ہو گئی اور ایک بچی کو جنم دے ڈالا۔ طارق نے اس بچی کو پیدائش کے فوری بعد مضافاتی علاقے میں پھینک دیا جہاں سے بچی کی لاش تھانہ صدر پولیس نے اٹھائی۔ 

اس بچی کی لاش پھینکنے کے شبے میں طارق کو گرفتار کرلیا گیا جس نے دوران تفتیش اعتراف کیا کہ یہ بچی اسی نے پھینکی تھی۔ اس نے بتایا کہ بچی پیدائش کے فوری بعد بیمار ہو گئی تھی اور اس کاانتقال ہو گیا تھا جس پر اس نے بچی کی میت جھاڑیوں میں پھینک دی۔ ملزم کو راولپنڈی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ میں پیش کیا گیا جہاں گزشتہ روز پیشی پر ملزم کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ متاثرہ خاتون نے ملزم کو معاف کر دیا ہے اور وہ دونوں شادی کرنے پر رضامند ہو گئے ہیں۔ اس پر جج جہانگیر گوندل نے متاثرہ خاتون سے اس بابت استفسار کیا تو اس نے تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ اس نے ملزم کو معاف کر دیا ہے اور وہ شادی کرنا چاہتے ہیں۔ ملزم طارق نیازی اور مہوش نے جج کے سامنے حلف لیا کہ وہ میاں بیوی بن کر اکٹھے رہیں گے۔ جس کے بعد عدالت نے ملزم کی ضمانت منظور کر لی اور اس کی رہائی کا حکم دے دیا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -راولپنڈی -