جان بچانے والی دواؤں کی قیمتوں میں اضافہ کیوں ضروری تھا ؟ڈاکٹر فیصل سلطان نے وجہ بتا دی

جان بچانے والی دواؤں کی قیمتوں میں اضافہ کیوں ضروری تھا ؟ڈاکٹر فیصل سلطان نے ...
جان بچانے والی دواؤں کی قیمتوں میں اضافہ کیوں ضروری تھا ؟ڈاکٹر فیصل سلطان نے وجہ بتا دی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے  کہا ہے کہ وہ دوائیں جو ناپید تھیں ان کو قیمتوں میں تھوڑے اضافے کی ضرورت تھی جس سے وہ میسر ہو سکتی ہیں،ہم نے اس کو مارکیٹ میں میسر کرنے کے لیئے اس کی قیمت میں اتنا اضافہ کیا کہ قابل عمل  ہو جائے۔

نجی ٹی وی کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے صحت کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ  94دوائیاں ملک میں ناپید ہیں یا تھیں،یہ وہ دوائیاں ہیں وہ عمومی طور پر سستی، لائف سیونگ اور پرانے پیٹرن پر ہیں لیکن وقت کے ساتھ ان کی قمیتوں میں مناسب تبدیلی نہیں آئی ہوتی، نتیجہ یہ ہوتا ہے کہ وہ مارکیٹ سے شارٹ ہوجاتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہی دوائی اگر دس کے بجائے 15 کی ہوگی تو بک جائے گی اور مارکیٹ میں میسر بھی ہو گی،قیمتوں میں کمی کی وجہ سے یہ دوائیاں مارکیٹ سے غائب ہو جاتی ہیں،جس کی وجہ سے  ضرورت مند سمگل شدہ یا گرے مارکیٹ کے ذریعے آئی ہوئی دوائی خریدتا ہے۔

ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ یہ اہم تھا کہ یہ 94دوائیاں جن میں کچھ ایمرجنسی دوائیاں ہیں، ان کی قیمتیں ایسی ہوں کہ قابل عمل   رہیں اور ان کا معیار برقرار رہے اور یہ ملک میں بک سکیں، وہ دوائیں جو ناپید تھیں ان کو قیمتوں میں تھوڑے اضافے کی ضرورت تھی جس سے وہ میسر ہو سکتی ہیں،ہم نے اس کو مارکیٹ میں میسر کرنے کے لیئے اس کی قیمت میں اتنا اضافہ کیا کہ قابل عمل  ہو جائے، انہوں نے کہا کہ نئی پرائسنگ پالیسی پر کام کر رہے ہیں، کئی دفعہ دوائیوں کو ڈبل پروموشن ملی،اب کسی دوائی کو ڈبل پروموشن نہیں لگے گی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -