" شادی کرلو " فلیٹ خالی کرانے والے سرکاری افسر کی بیوہ سے بدتمیزی، ہنگامہ برپا ہوگیا

" شادی کرلو " فلیٹ خالی کرانے والے سرکاری افسر کی بیوہ سے بدتمیزی، ہنگامہ ...

  

کراچی (ویب ڈیسک)  وفاقی رہائشی کالونی ایف سی ایریا میں سٹیٹ آفس کے ڈائریکٹر کی جانب سے بیوہ خاتون کے ساتھ انتہائی غیر مناسب لہجہ اور غیر اخلاقی الفاظ کے استعمال پر علاقہ میں اشتعال پھیل گیا ہے۔ایف سی ایریا یونین کمیٹی کے ایک رکن کی جانب سے ویڈیو گروپ میں شئیر کی گئی  ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ اسٹیٹ آفس کراچی کے ڈائریکٹر محمد ایوب کی جانب سے بیوہ خاتون سے غیر اخلاقی گفتگو کی گئی ہے۔ اس میں مذکورہ افسر نے کہا ہے کہ" بیوہ ہو تو شادی کرلو "۔

"ایکسپریس نیوز "کے مطابق اس ویڈیو میں مذکورہ  افسر کے الفاظ کی ایف سی ایریا ریذیڈینس  کمیٹی نے شدید مذمت کی ہے۔اس واقعہ کے حوالے سے مذکورہ خاتون کے پڑوسی محمد احمر نے بتایا کہ ایف سی ایریا وفاقی ملازمین کی کالونی ہے۔یہاں مکان الاٹ کرنا وزارت ہاؤسنگ کے ذیلی ادارے  سٹیٹ آفس کراچی کا کام ہے۔

جمعہ کو  سٹیٹ آفس کراچی کےڈائریکٹر محمد ایوب عملہ کے ہمراہ  فلیٹ نمبر 5 بلاک ایف 13 پرآئے۔انہوں نے خاتون سے غیر مناسب لہجے میں گفتگو کی جس پر خاتون نے احتجاج کیا۔اس حوالے سے  ایف سی ایریا یونین کے رہنماء  محمد ندیم نے بتایا کہ غیر قانونی فلیٹ خالی کرانا سٹیٹ آفس کا کام ہے ۔یونین اس میں مداخلت نہیں کرتی۔ڈائریکٹر  سٹیٹ آفس کراچی محمد ایوب نے مذکورہ  فلیٹ میں موجود بیوہ خاتون سے غیر مناسب الفاظ میں گفتگو کی۔ یہ حق کس کو نہیں پہنچتا کہ وہ بیوہ خاتون کو شادی کا مشورہ دے، ہم اس عمل کی مذمت کرتے ہیں۔

یونین وزیراعظم اور وفاقی وزیر ہاؤسنگ سے مطالبہ کرتی ہے کہ  سٹیٹ آفسر کراچی محمد ایوب کے خلاف کارروائی کی جائے۔اس معاملے کی تحقیقات کرائی جائے۔سٹیٹ آفس کے عملے نے کہا ہے کہ اس فلیٹ کو قانون کے مطابق خالی کرانے کے لیے کارروائی کی گئی ہے۔واضح رہے کہ سٹیٹ افسر محمد ایوب کو حالیہ دنوں میں ڈائریکٹر سٹیٹ کراچی تعینات کیا گیا ہے۔ڈائریکٹر جنرل سٹیٹ آفس پاکستان عبید الدین سے  کئی مرتبہ اس صورتحال پر رائے جاننے کے لیے رابطہ کیا گیا لیکن انہوں نے کال اٹینڈ نہیں کی۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -