گلوکارہ شمشاد بیگم94سال کی عمر میں انتقال کر گئیں

گلوکارہ شمشاد بیگم94سال کی عمر میں انتقال کر گئیں

ممبئی( نیٹ نیوز)برصغیر کی ابتدائی پلے بیک گانے والوں میں سے ایک گلوکارہ شمشاد بیگم ممبئی میں انتقال کر گئیں ،ان کی عمر چورانوے سال تھی۔ شمشاد بیگم کی صاحبزادی اوشا رتراکے مطابق ان کی والدہ کچھ مہینوں سے علیل تھیں اوراسپتال میں داخل تھیں۔ 14 اپریل 1919 کو امرتسر میں پیدا ہونے والی شمشاد بیگم نے کیرئر کا آغاز 16دسمبر1937 کو آل انڈیا ریڈیو سے کیا۔ ان کی صاف اور واضح آواز کو سامعین نے بہت پسند کیا۔ انہوں نے برصغیر کے نامور موسیقاروں او پی نیر اور نوشاد علی کے ساتھ کام کیا اور ان کے ساتھ گانے والوں میں لتا منگیشکر، آشا بھونسلے اور محمد رفیع شامل تھے۔ شمشاد بیگم کی آواز سے تو سامعین کی شناسائی تھی ہی مگر لوگوں کو ان کا چہرہ دیکھنے کا موقع 1970 کی دہائی میں ملا، کیونکہ وہ اپنی تصاویر کھنچوانے سے ہمیشہ کتراتی تھیں۔انہوں نے'' میرے پیا گئے رنگون،وہاں سے کیا ہے ٹیلے فون''۔'' کبھی آر کبھی پار لاگا تیر نظر''۔''کہیں پہ نگاہیں کہیں پہ نشانہ''۔''بوجھ میرا کیا نام رے''۔''سیاں دل میں آنا رے''۔''لے کے پہلا پہلا پیار'' اور ''چھوڑ بابل کا گھر ''جیسے مقبول ترین گانے گائے۔1955 میں اپنے شوہر گنپت لال بٹو کے انتقال کے بعد وہ اپنی بیٹی اوشا رترا اور داماد کے ساتھ ممبئی میں رہائش پذیر تھیں۔

مزید : کلچر