بھارت میں مسلم طلبا پر عرصہ حیات تنگ کیا جا رہا ہے، محمد راشد

بھارت میں مسلم طلبا پر عرصہ حیات تنگ کیا جا رہا ہے، محمد راشد

لاہور(نمائندہ خصوصی)المحمدیہ سٹوڈنٹس پاکستان کے مسؤل محمد راشد نے کہا ہے کہ بھارت میں مسلم طلبا پر عرصہ حیات تنگ کیا جا رہا ہے۔علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں پولیس کی فائرنگ سے مسلمان طالبعلم کی شہادت پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا بھارت میں مسلم اور اقلیتی طلبا کا استحصال جاری ہے اور انہیں تعلیم جیسے بنیادی حق سے محروم کیا جا رہا ہے۔انتہا پسند طلبا کے ذریعے مسلمان طلبا کو ہراساں کرنا بھارت سرکار کا وطیرہ بن چکا ہے۔اس کے علاوہ دیگر اقلیتی طلبا بھی بھارت سرکار کے اس انتہا پسند رویے سے پریشان اور ان کی زندگیوں کا خطرات لاحق ہیں۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ اور دیگر عالمی ادارے بھارت میں مسلم طلبا پر ہونے والے تشدد کا نوٹس لیں۔اس سے قبل بھی جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں مسلم طلبا پر پاکستان سے تعلق کا الزام لگا کر ان کو ہراساں کیا جاچکا ہے۔

۔ اب بھارت سرکار ان حربوں کے ذریعے مسلم طلبا کو تعلیم حاصل کرنے سے بھی روک رہی ہے۔انہوں نے بھارت کی جانب سے ان اقدامات کی مذمت کرتے ہوئے ان کی روک تھام کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4